site
stats
اہم ترین

افغان فورسز کی فائرنگ سے زخمی میجرعلی جواد چنگیزی شہید

اسلام آباد:‌ طور خم بارڈر پر افغان فورسز کی فائرنگ سے زخمی ہونے والے میجر علی جواد چنگیزی زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے جام شہادت نوش کرگئے۔

تفصیلات کے مطابق افغان فورسز کی ہٹ دھرمی برقرار ہے اور طورخم سرحد پر بلااشتعال فائرنگ جاری ہے، افغان فورسز کی فائرنگ سے زخمی میجرعلی جواد چنگیزی شہید ہوگئے ، میجر جواد طور خم بارڈر پر افغان فورسز کی فائرنگ سے زخمی ہو ئے تھے اور سی ایم ایچ پشاور میں زیر علاج تھے۔

میجر جواد کا تعلق آرمڈ کور سے اوروہ فرنٹیر کور کے لئے خدمات سرانجام دے رہے تھے، انہوں نے اگلے رواں سال دسمبر میں ریٹائرڈ ہو جانا تھا۔

گزشتہ دو روز میں طورخم سرحد پر افغان فورسز کی بلااشتعال فائرنگ سے چھ اہلکاروں سمیت انیس افراد زخمی ہوگئے، پاکستان نے افغانستان سے شدید احتجاج کرتے ہوئے فائرنگ کی تحقیقات کرانے کا مطالبہ کردیا ہے۔

فائرنگ کے واقعے کے بعد افغان وزارت خارجہ نے کابل میں پاکستانی سفیر سید ابرار کو طلب کرکے پاک افغان سرحد کشیدگی کی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا، ذرائع کے مطابق پاکستانی سفیر نے افغان حکام پر واضح کیا ہے کہ فائرنگ افغان سرحد سے کی گئی پاکستان سرحد منظم کرنے کیلئے اپنی حدود میں گیٹ تعمیر کررہا ہے، جس کی اطلاع پاکستانی سفار تخانے نے افغان حکومت کو دو روز قبل دی۔

مزید پڑھیں:  طورخم سرحد پر ایک بار پھر فائرنگ،مزید پانچ اہلکار زخمی

اس سے قبل پاکستان نے گزشتہ رات اشتعال انگیزی کے واقعے پر افغان ناظم الامورکو طلب کرکے شدید احتجاج کرتے ہوئے فائرنگ کی تحقیقات کا مطالبہ کیا تھا۔

مزید پڑھیں: دفتر خارجہ میں افغان ناظم الامور کی طلبی، طور خم فائرنگ پر احتجاج

سرحد پر کشیدگی کے بعد طورخم اور لنڈی کوتل میں کرفیو لگانا پڑا، کئی دیہات بھی خالی کرا لئےگئےجبکہ اسپتالوں میں ایمرجنسی نافذ ہے۔

گزشتہ روز ترجمان پاک فوج نے ٹوئٹر پر وقوعہ کانقشہ جاری کرتے ہوئےبتایا کہ گیٹ سینتیس میٹر پاکستانی علاقے کے اندر ہے۔ سرحد پار کرنے والوں کی جانچ پڑتال کے لئے گیٹ بہت ضروری ہے اور افغان فورسز زیر تعمیر گیٹ پر فائرنگ کر رہی ہیں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top