پاکستان کا مفاد سب سے مقدم ہے، شام محمود قریشی نے امریکی وزیرِخارجہ پرواضح کردیا -
The news is by your side.

Advertisement

پاکستان کا مفاد سب سے مقدم ہے، شام محمود قریشی نے امریکی وزیرِخارجہ پرواضح کردیا

اسلام آباد: دفترِ خارجہ میں پاک امریکا وفود کی سطح پر جاری مذاکرات اختتام پذیر ہوگئے، شاہ محمود قریشی نے امریکی وفد کو واضح کیا کہ نئی حکومت کے لیے ملک کا مفاد سب سے مقدم ہے۔

تفصیلات کے مطابق امریکی وزیرِ خارجہ مائیک پومپیو کی قیادت میں امریکی وفد دفترِ خارجہ پہنچا تھا جہاں شاہ محمود قریشی نے ان کا استقبال کیا ، دونوں ممالک کے وفود کے درمیان مذاکرات 40 منٹ تک جاری رہے، ترجمان دفتر ِ خارجہ کے مطابق پاکستان نے امریکی وفد پر واضح کیا کہ دونوں ممالک کے تعلقات ایک بار پھر بھروسے اور احترام کی بنیادوں پر استوار کرنے کی ضرورت ہے۔

امریکا کے وزیر خارجہ مائیک پومپیو آج ایک روزہ دورے پر اسلامی جمہوریہ پاکستان پہنچے ہوئے ہیں۔ ان کے ہمراہ امریکا کی مسلح افواج کے چیف آف اسٹاف جنرل جوزف ڈنفرڈ بھی ہیں۔وزیر خارجہ مائیک پومپیو کا طیارہ نور خان ایئر بیس پر اترا تو ان کا استقبال وزیر خارجہ کے بجائے دفتر خارجہ کے ایڈیشنل سیکریٹری شجاع عالم نے کیا تھا۔

شاہ محمود قریشی نے پاکستانی وفد کی قیادت کرتے ہوئے امریکی حکام کو مختلف معاملات پر پاکستان کے تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے ان پر پاکستانی موقف سے آگاہ کیا۔

مذاکرات میں شاہ محمودقریشی نے امریکی وفد کو وزیراعظم عمران خان کےاصلاحاتی ایجنڈےسےآگاہ کیا اور بتایا کہ عام آدمی کےمعیارزندگی میں بہتری اور عالمی سطح پرپاکستان کاتشخص بلندکرنا نئی حکومت کی اولین ترجیحات میں شامل ہے۔

دونوں وفود کے درمیان ہونے والے ان مذاکرات میں پاکستان اور امریکا کے تعلقات پربھی گفتگو ہوئی اور طرفین کی جانب سے پاک امریکا دوطرفہ تعلقات میں بہتری کےمواقع پرتبادلہ خیال کیا گیا۔

امریکی وفد نے خطے کی مجموعی صورتحال اور بالخصوص افغانستان کے موضوع پر پاکستانی وفد سے تبادلہ خیال کیا اور پاکستان سے تعاون طلب کیا ، جس پر شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ افغانستان میں قیام امن کے لیے کرداراداکرتےرہیں گے لیکن نئی حکومت کے لیے پاکستان کا مفاد سب سے مقدم ہے۔

پاکستانی سفارتی ذرائع کے مطابق امریکی وزیر خارجہ کے دورہ پاکستان کے موقع پر ان کی وزیر اعظم عمران خان سے بھی ملاقات متوقع ہے۔ پومپیو دورہ مکمل کر کے آج ہی نئی دہلی روانہ ہوں گے جہاں امکان ہے کہ وہ بھارت پر ایران سے تیل کی خریداری روکنے کے لیے دباؤ ڈالیں گے۔

امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو نے دورہ پاکستان سے قبل واشنگٹن میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ امید ہے پاک امریکا تعلقات میں نئی پیشرفت کا آغاز کریں گے۔امریکی وزیر خارجہ نے میڈیا نمائندگان نے بات چیت کرتے ہوئے کہا تھاکہ پاکستان افغانستان میں ثالثی کے لیے امریکا کے ساتھ تعاون کرے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں