site
stats
پاکستان

پاک چائنا بحری مشقوں کا آغاز انیس نومبر سے ہوگا

کراچی : پاک چائنا بحری مشقوں کا آغاز انیس نومبر سے ہوگا، پاک چائنا مشترہ مشقوں سے متعلق کراچی میں پریس بریفنگ دیتے ہوئے کموڈور فواد بیگ نے بتایا کہ چوتھی پاک چائنا بحری مشقوں کے پہلے مرحلہ ہاربر اور دوسرا مرحلہ سمندر میں مشق ہوگا۔

پاکستان چائنا مشترکہ بحری مشقوں سے متعلق کموڈور فواد بیگ نے نے پریس بریفنگ دی، بریفنگ میں چائینز نیوی کے اعلیٰ افسران نے بھی شرکت کی۔

پاک چائنا مشترکہ مشقوں سے سیکیورٹی میں مزید بہتری آئی گی، کموڈور فواد امین

کموڈور فوادامین نے پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاک چین بحری مشقیں دو مرحلوں میں ہوگی، پہلے مرحلہ ہاربر اور دوسرا مرحلہ سمندر میں مشق ہوگا، پاک چائنا مشترکہ مشقوں سے سیکیورٹی میں مزید بہتری آئی گی، سی پیک پراجیکٹ گیم چینجر ثابت ہو گا، سی پیک سے پاک نیوی کی ذمہ داریوں میں اضافہ ہوگیا ہے، پاکستان اور چین کے درمیان برادرانہ تعلقات ہیں۔

china

کموڈور فواد بیگ نے پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ بحری قزاقوں کا مسئلہ اہم ہے، قزاقی روکنے کے لئے کام کر رہے ہیں، گزشتہ 10 برسوں میں قزاقی میں واقعات میں کمی آئی ہے۔

انکا کہنا تھا کہ چینی بحریہ کے دو جنگی جہاز کراچی پہنچ گئے ہیں، چینی اور پاکستان کے بحری جہاز کے درمیان مشترکہ بحری مشقیں کریں گے، چینی بحریہ کی کراچی آمد سے دونوں ممالک کی بحری افواج کی مشترکہ مشقوں سے باہمی دفاعی صلاحیتوں میں اضافہ ہو گا جبکہ مشترکہ مشقوں سے ایک دوسرے کے تجربات سے استفادہ کرنے کا موقع حاصل ہوگا۔

کموڈور فواد بیگ نے بتایا کہ چینی بحریہ کے حکام پاکستان نیوی کے اعلیٰ افسران سے ملاقاتیں اور باہمی دلچسپی کے امور پر بات چیت کریں گے، مشترکہ مشقیں گوادر پورٹ پر جہازوں کی آمد ورفت محفوظ بنانے کی صلاحیتوں میں اضافے کا باعث بھی بنیں گی،

سی پیک کے حوالے سے پاک چین مشترکہ بحری مشق کافی اہمیت کی حامل ہے، سینئر کیپٹن تاوٴ چن

سینئر کیپٹن تاوٴ چن نے کہا کہ مشترکہ مشقوں سے پاک چین نیوی کے تعاون میں مزید بہتری آئی گی، دو طرفہ مشقیں مستقبل میں بھی جاری رہیں گی۔

کیپٹن تاوٴ چن نے کہا کہ سی پیک کے حوالے سے پاک چین مشترکہ بحری مشق کافی اہمیت کی حامل ہے، پاک چین بحری مشق کا مقصد مشترکہ بحری آپریشن کی صلاحیت میں اضافہ کرنا ہے، پاک چین بحری مشق اقتصادی ترقی اور خوشحالی اور امن و سلامتی کیلئے بھی اہم ہے۔

انکا مزید کہنا تھا کہ دو طرفہ بحری مشق خطے کی میری ٹائم سیکیورٹی اور امن و استحکام پر دور رس نتائج مرتب کرے گی، مشترکہ بحری مشق میں پاکستان اور چین کے بحری جہاز ہیلی کاپٹر میری ٹائم پیٹرول ایئر کرافٹ اور اسپیشل فورسز اور بحری جہازوں کی جنگی چالوں پر مشتمل ہوگی۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top