تازہ ترین

پاکستان چین لازوال دوستی کے 70 سال ، اے آر وائی کے صحافی کی بنائی ہوئی دستاویزی فلم ٹاپ 5 میں شامل

اسلام آباد : اے آر وائی کے صحافی عبدالقادر کی پاکستان اور چین کے درمیان 70 سالہ سفارتی تعلقات پر بنائی ہوئی دستاویزی فلم کو ٹاپ 5 میں شامل کرلیا گیا، فلم میں دفاعی اور ٹیکنالوجی کے میدان میں چین کی ترقی اور ثقافتی روایات کو دکھایا گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان اور چین کے درمیان 70 سالہ سفارتی تعلقات کے حوالے سے دونوں ممالک کے درمیان نوجوانوں کے ایکسچینج پروگرام کی تقریب کا انعقاد کیا گیا ، جس میں آل چائنہ یوتھ فیڈریشن کے حکام اور معاون خصوصی عثمان ڈار کی شرکت کی۔

تقریب میں دونوں ممالک کے صحافیوں کی دستاویزی فلمز کو نشر کیا گیا ، پاکستان سے اے آر وائی نیوز کے صحافی عبدالقادر کی دستاویزی فلم کو تقریب میں دکھایا گیا، اے آر وائی کے صحافی عبدالقادر کی بنائی ہوئی دستاویزی فلم ٹاپ 5 میں شامل کرلی گئی۔

فلم میں دفاعی اور ٹیکنالوجی کے میدان میں چین کی ترقی اور ثقافتی روایات کو دکھایا گیا ہے ، عبدالقادر چین میں پاکستانی یوتھ کی نمائندگی کر چکے ہیں۔

اس موقع پر معاون خصوصی عثمان ڈار نے کہا کہ وزیراعظم عمران خان کی قیادت میں ملک کا سب سے بڑا یوتھ پروگرام جاری ہے، دونوں ممالک کے درمیان نوجوانوں کے وفود کا تبادلہ خوش آئند ہے۔

عثمان ڈار کا کہنا تھا کہ وزیراعظم کے حکم پر پاکستان کی پہلی قومی یوتھ کونسل قائم کر دی گئی ہے، نوجوانوں کو ملکی فیصلہ سازی کا سنہرا موقع دیا جا رہا ہے۔

چینی حکام نے کہا کہ پاکستانی وزیراعظم کا نوجوانوں سے متعلق ویژن مثالی ہے، کامیاب جوان پروگرام کی صورت میں نوجوانوں کو حکومتی تعاون حاصل ہے، پاکستان کی زیادی آبادی نوجوانوں پر مشتمل ہے، اس سے فائدہ اٹھایا جانا چاہئیے، چینی حکام

چین پاکستان کے ساتھ دفاعی، سیاسی، سفارتی محاذ پر تعاون جاری رکھے گا، سی پیک اور بیلٹ اینڈ روڈ منصوبے میں پاکستان سب سے اہم شراکت دار ہے، میگا منصوبہ نوجوانوں کو معاشی ترقی میں شامل کرنے کا سنہرا موقع ہے۔

سربراہ کامیاب جوان پروگرام عثمان ڈار نے چینی نوجوانوں کے وفد کو دورہ پاکستان کی دعوت دی ، جس پر چینی حکام نے کہا رواں سال کے آخر میں چینی نوجوانوں کا وفد پاکستان کا دورہ کرے گا۔

Comments

عبدالقادر
عبدالقادر
عبدالقادر پچھلے 8برس سے اے آر وائی نیوز میں بطور سینئر رپورٹر خدمات انجام دے رہے ہیں، آپ وزیراعظم عمران خان اور حکمراں جماعت پاکستان تحریک انصاف سے جڑی خبروں اور سیاسی معاملات پر گہری نظر رکھتے ہیں۔