The news is by your side.

Advertisement

وقت آگیا ہے کہ صدرٹرمپ کی ثالثی کی پیشکش پرآگے بڑھا جائے،اسد مجید خان

واشنگٹن : امریکا میں پاکستان کے سفیراسد مجید خان کا کہنا ہے کہ کشمیر پر بھارتی اقدام سے صورتحال انتہائی کشیدہ ہے، وقت آگیا ہے کہ مسئلہ کشمیرپر صدرٹرمپ کی ثالثی کی پیشکش پرآگے بڑھا جائے۔

تفصیلات کے مطابق امریکا میں پاکستان کے سفیراسد مجید نےامریکی اخبار واشنگٹن پوسٹ میں آرٹیکل میں کہا بھارت کشمیر میں بحران پیداکررہاہے ، وقت آگیا ہے امریکا آگے آئے بھارت کو خطے کے امن وسلامتی کی کوئی پرواہ نہیں، ماضی میں اتحادیوں کی کوششوں سے کشیدگی کم ہوئی۔

پاکستانی سفیر کا کہنا تھا مسئلہ کشمیر اقوام متحدہ کےایجنڈے میں سب سے پرانا تنازع ہے، بھارت نے بتا دیا وہ عالمی معاہدوں کو بالکل اہمیت نہیں دیتا، صدر ٹرمپ کی ثالثی کی پیشکش پر کوشش کرنے کا وقت آگیا ہے ، امریکی کوششیں کشمیری عوام کے لئے کی جائیں۔

اسدمجیدخان نے کہا کہافغانستان میں امن عمل کی کامیابی کیلئے ضروری ہےکہ امریکا بھارت کوکوئی نیا تنازعہ کھڑا کرنے سے باز رکھے ،  امریکی صدرکی ثالثی کی پیشکش کوکشمیریوں نےسراہاتھا، کشمیری عوام 72 برس سے حق خودارادیت کے منتظر ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ بھارت نےسلامتی کونسل کی قراردادوں کی خلاف ورزی کی، قراردادیں بھی کشمیرمیں حق خودارادیت پر زور دیتی ہیں، مقبوضہ کشمیر میں لاک ڈاؤن ہے،اشیائے ضرور یہ تک رسائی نہیں۔

پاکستانی سفیر نے کہا بھارت نےایک کروڑ20لاکھ کشمیریوں کادنیاسےرابطہ منقطع کردیا ہے ، متعددعالمی کنونشنز بھارت کو آبادی کا تناسب نہ بدلنے کا پابند کرتے ہیں، بھارت کشمیر پر ناجائز قبضے اور بھیانک جرائم سے توجہ ہٹانے میں ناکام رہا۔

اسدمجیدخان کا کہنا تھا کہ بی جے پی دلتوں،عیسائیوں،کشمیریوں کی حیثیت ختم کرناچاہتی ہے، بھارت مسئلہ کشمیر یکطرفہ طور پر حل کرنا چاہتا ہے، وزیراعظم عمران خان خبردارکرچکے دونوں ملک ہتھیاروں سے لیس ہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں