The news is by your side.

Advertisement

پاک امریکہ تعلقات، دونوں ممالک میں رابطے، برف پگھلنے لگی

اسلام آباد : پاکستان اور امریکہ کے درمیان حالیہ تناؤ کے بعد تعلقات میں بہتری کیلئے دونوں ممالک میں رابطے جاری ہیں، اس سلسلے میں مختلف امریکی وفود جلد پاکستان کا دورہ کریں گے۔

اس حوالے سے ذرائع کا کہنا ہے کہ ڈونلڈ ٹرمپ کے متنازعہ ٹوئٹ کے بعد پاکستان اور امریکہ کے تعلقات میں پیدا ہونے والی کشیدگی میں رفتہ رفتہ کمی آرہی ہے۔

تازہ ترین اطلاعات کے مطابق پاک امریکا تعلقات میں بہتری کیلئے دونوں ممالک میں رابطے جاری ہیں اور بات چیت کیلئے دس روزمیں متعدد امریکی وفو د اسلام آباد آئے جن کے تعلقات میں بہتری کے لئے سیاسی ،سفارتی اورعسکری سطح پر رابطے ہوئے ہیں۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ دونوں ممالک نے ایک دوسرے کے سامنے اپنے اپنے مطالبات رکھے، اس سلسلے میں پاکستان نے امریکا کے سامنے تین بڑے مطالبات پیش کیے ہیں۔

ان مطالبات میں سب سے پہلے افغانیوں کی وطن واپسی، بارڈرمینجمنٹ اور افغانستان کی حدود میں حکومتی عملداری یقینی بنانا شامل ہے۔ ذرائع نے مزید کہا کہ دونوں ممالک تعلقات کو معمول پرلانے کے لئے پر امید ہیں۔


مزید پڑھیں: امریکہ نے پاکستان کی سیکورٹی امداد روک دی


واضح رہے کہ مشیر خزانہ اور امریکی سفیر ڈیوڈ ہیل کے درمیان ہونے والی ملاقات میں دونوں ممالک کے باہمی تعلقات پر گفتگو کی گئی، وزارت خزانہ کے اعلامیہ میں کہا گیا ہے کہ امریکی سرمایہ کاروں کاوفد جلد پاکستان کا دورہ کرے گا، ڈیوڈہیل کا کہنا تھا کہ دونوں ممالک کے درمیان مضبوط تجارتی روابط قائم ہیں۔


مزید پڑھیں: پاکستان کےساتھ خراب تعلقات امریکہ کےمفاد میں نہیں‘ نیویارک ٹائمز


علاوہ ازیں اسلام آباد میں پاکستان کے کیمیائی مواد کی بحفاظت مسلسل فراہمی اور سیکورٹی کے بارے میں تین روزہ ورکشاپ کا اہتمام کیا گیا، پاک امریکہ مشترکہ ورکشاپ کا افتتاح وزارت خارجہ کی اسپیشل سیکرٹری تسنیم اسلم نے کیا۔

اس موقع پر امریکی اور بین الاقوامی کیمیائی ماہرین کے علاوہ پاکستانی کیمیائی مواد کی صنعت کے نمائندے موجود تھے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں