The news is by your side.

Advertisement

مخدوش عمارت کے مکین کھلے آسمان تلے رات گزارنے پر مجبور

کراچی : پاکستان چوک کی مخدوش عمارت کے مکین کھلے آسمان تلے رات گزارنے پر مجبور ہیں، اے آر وائی نیوز سے بات کرتے ہوئے مکینوں کا مطالبہ تھا کہ انہیں رقم یا متبادل رہائش دی جائے،سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی نے دوماہ قبل ہی عمارت کی حالت زارسے متعلق مکینوں کو آگاہ کرد یا تھا۔

تفصیلات کے مطابق کراچی کے علاقے پاکستان چوک پر قائم عمارت کا زینہ اچانگ گر گیا تھا،جس کے مکین آج بھی کھلے آسمان تلے رات گزارنے پر مجبور ہیں۔

اے آر وائی نیوز سے بات کرتے ہوئے مکینوں کا کہنا تھا کہ وہ سردی کے موسم میں گھروں سے باہر سڑک پر رات کیسے گزاریں، ہمیں رقم دی جائے یا گھر دیا جائے۔ کھانے کو کچھ نہیں، گھرکیسے خالی کردیں۔

کراچی کی لرزتی عمارت دو ماہ پہلے ہی مخدوش قرار دی جا چکی تھی۔ رات گئے عمارت کا زینہ بھی زمین بوس ہوگیا تھا، سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی نے پاکستان چوک کی عمارت کی حالت زار دیکھ دو ماہ پہلے یہ بینرلگا دیا تھا کہ ’’یہ عمارت خستہ ہے۔ احتیاط کریں ‘‘

مزید پڑھیں : کراچی: مخدوش عمارت سے لوگوں کو نکالنے کا عمل جاری

لرزتی بوسیدہ عمارت کو دیکھ کر لگتا ہے جیسے یہ بلڈنگ پاکستان بننے سے بھی کئی سال پہلے بنی ہو دیواریں اور چھجے جھڑ چکے ہیں۔

رات گئے عمارت کا زینہ بھی زمیں بوس ہوگیا تھا، متاثرین بھی ڈٹے تھے جان جاتی ہے تو جائے لیکن جب تک دوسرا ٹھکانہ نہیں ملے گا عمارت خالی نہیں کریں گے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں