site
stats
بزنس

کسٹم کو ایک ہزار ارب روپے کی ریکارڈ آمدنی

کراچی: پاکستان کسٹمز اپریز منٹ نے رواں مالی سال کے دوران 25 فیصد اضافے سے ایک ہزار ارب روپے سے زائد کا ریونیو وصول کیا، چیف کلکٹر اپریزمنٹ ساؤتھ عبد الرشید شیخ کا کہنا ہے کہ ایف بی آر کے دیے گے ہدف سے زائد آمدنی ہوئی ہے۔

چیف کلکٹر اپریزمنٹ ساؤتھ عبد الرشید شیخ نے رواں سال کی کارکردگی کے بارے میں بتایا کہ ایف بی آر نے 10 کھرب روپے کا ہدف مقرر کیا تھا تاہم محکمے کے تمام عملے نے جانفشانی سے کام کیا اور مالی سال کے اختتام سے قبل ہی صرف پورٹ قاسم سے ہدف سے زائد آمدنی 10  کھرب 4 ارب روپے ہے جو  مخلتف ڈیوٹیوں کی مد میں وصول کیے گئے۔

ان کا کہنا تھا کہ ابھی مالی سال ختم ہونے میں دو ہفتے باقی ہیں اور کسٹم ڈیوٹی،سیلز ٹیکس اور انکم ٹیکس کی مد میں مزید آمدنی متوقع ہے۔

ممبر کسٹمز محمد زاہد کھوکھر کے مطابق کسٹمز ڈیوٹیز کی مد میں کسی قسم کی رعایت اور چھوٹ کسی کو بھی نہیں دی گئی اور ہمیں ہدف سے زائد آمدنی حاصل ہوئی، اپریزمنٹ ساؤتھ کی کاوش سے کسٹم ڈیوٹی،سیلز ٹیکس اور انکم ٹیکس کی وصولی میں 20 فیصد اضافہ ہوا ہے۔

انہوں نے مزید بتایا کہ اس سال کسٹم ڈیوٹی کی مد میں 24 فیصد،سیلز ٹیکس میں 19 فیصد اور انکم ٹیکس کی مد میں 12 اعشاریہ 5 فیصد اضافہ ہوا ہے، علاوہ ازیں فیڈرل ایکسائز ڈیوٹی میں بھی 17 فیصد اضافہ ہوا ہے۔

خیال رہے کہ یہ ایف بی آر کی تاریخ میں کسی بھی انفرادی یونٹ کا ریکارڈ اضافہ ہے۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top