The news is by your side.

Advertisement

کرونا ویکسین کی خریداری سے متعلق پاکستان کا بڑا فیصلہ

اسلام آباد: کرونا وبا کی تیسری لہر سے نبردآزما قوم کے لئے بڑی خوشخبری ہے کہ پاکستان کا چینی کمپنی سے لاکھوں کرونا ویکسین کا معاہدہ طے پایا گیا ہے۔

ذرائع کے مطابق پاکستان نے چین سے بڑے پیمانے پر کرونا ویکسین کی خریداری کر لی ہے، بتایا گیا ہے کہ مجموعی طور پر ستر لاکھ ویکسین کا معاہدے طے پایا ہے۔

ذرائع کے مطابق ان ستر لاکھ ویکسین میں چالیس لاکھ “سائینوفارم ” کی ڈوز ہیں جبکہ تیس لاکھ کین سائینو کی سنگل ڈوز ہیں، چینی کمپنیز پاکستان کو کرونا سے بچاؤ کی ویکسین مرحلہ وار فراہم کریں گی۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ چینی کمپنی کین سائینو کی تیارکردہ “کونویڈیسیا “سنگل ڈوز ویکسین ہے، مذکورہ چینی کمپنیاں آئندہ ماہ سے پاکستان کو ویکسین فراہمی کا آغاز کریں گی۔

اس سے قبل این سی او سی کے سربراہ اسد عمر نے بھی سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر جاری اپنے بیان میں تصدیق کی تھی کہ پاکستان کو اپریل سے “کین سائنو ویکسین “بڑی تعداد میں ملنا شروع ہوجائے گی، کین سائنو ویکسین کی بڑی تعداد ملنےپر30لاکھ خوراکیں بنائی جائیں گی۔

یہ بھی پڑھیں:  سندھ حکومت کا 50 لاکھ کرونا ویکسین خریدنے کا فیصلہ

اسد عمر نے اپنے ٹوئٹ میں لکھا کہ ویکسین پاکستان میں ہی پیک کی جائےگی اور بڑی تعداد میں ویکسین رکھنے سے متعلق انتظامات اور عملے کی تربیت کردی گئی ہے۔

واضح رہے کہ آج کراچی میں نیوز کانفرنس کرتے ہوئے صوبائی وزیر صحت ڈاکٹر عذراپیچوہو نے بتایا کہ این سی او سی نے صوبوں کو ویکسین خریدنے کی اجازت دےدی ہے، جس کے بعد سندھ حکومت نے چینی ویکسین ” کین سائینو” کی پچاس لاکھ ڈوز خریدنے کا فیصلہ کیا ہے اور چین سے یہ سنگل ڈوزویکسین براہ راست لی جائےگی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں