The news is by your side.

Advertisement

چار سدہ : پاکستانی پرچم کی بے حرمتی پر علی وزیر کیخلاف مقدمہ درج

چار سدہ : پاکستانی پرچم کی بے حرمتی پر اور اشتعال انگیز تقریر کرنے پر ایم این اے علی وزیر کیخلاف مقدمہ درج کرلیا گیا، ایف آئی آر مقامی ایس ایچ او کی مدعیت میں درج کی گئی۔

تفصیلات کے مطابق چارسدہ میں اشتعال انگیز تقریر اور پاکستانی پرچم کی بے حرمتی کرنے پر ایف آئی آر درج کی گئی ہے، اس حوالے سے ذرائع کا کہنا ہے کہ چارسدہ کے مقامی ایس ایچ او کی مدعیت میں ایف آئی آر میں ممبر قومی اسمبلی علی وزیر کو نامزد کیا گیا گیا ہے۔

ذرائع کے مطابق مقدمے کے متن میں کہا گیا ہے کہ علی وزیر نے ریاست اور ریاستی اداروں کیخلاف ہرزہ سرائی کی۔ مقدمے میں دفعہ 120،153اے،121اےلگائی گئی ہیں، علی وزیر نے اشتعال انگیز تقریر میں شہروں کو تباہ کرنے کیلئے اکسایا۔

اس حوالے سے صوبائی وزیر شوکت یوسفزئی کا کہنا ہے کہ علی وزیر کا بیان انتہائی افسوسناک ہے، اس طرح کی سوچ رکھنے والوں کیلئے پارلیمنٹ کے دروازے بند ہونے چاہئیں، آزادی اظہار رائے کا غلط استعمال نہیں کرنا چاہیے۔

صوبائی وزیر کا کہنا تھا کہ کسی نے سیاست کرنی ہے تو کرے مگر ریاست کا مفاد پہلے ہوناچاہیے، علی وزیر کیخلاف تحقیقات اور سخت ایکشن ہونا چاہیے، وہ سیاست نہیں کررہے بلکہ انتشار پھیلانے کی کوشش کررہے ہیں، پختونوں کانام استعمال کرکے سازش کرنے والوں کو کامیاب نہیں ہونے دیں گے۔

اس کے علاوہ فیصل کریم کنڈی نے کہا کہ علی وزیر نے جو بات کہی وہ غلط ہے ان کو سمجھانے کی ضرورت ہے، ان کے ساتھ موجود لوگوں کو انہیں سمجھانا چاہیے، علی وزیر نے جو کہا اس کی مذمت کرتے ہیں تحقیقات ہونی چاہیے، میں کسی کا دفاع نہیں کررہا مگر ہر ادارے کو اپنا کام کرناچاہیے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں