site
stats
پاکستان

او آئی سی کا وفد آزاد کشمیر کا دورہ کرے گا: دفترِ خارجہ

اسلام آباد: دفترخارجہ کا کہنا ہے کہ تنظیم تعاون اسلامی (او آئی سی) کا انسانی حقوق کمیشن آزاد کشمیرکا دورہ کرے گا‘ او آئی سی نےجموں کشمیر کے دورے کے لیے بھارت سے بھی رابطہ کیاتھا تاہم بھارت نے مثبت جواب نہیں دیا۔

دفترخارجہ کے ترجمان مطابق او آئی سی کا انسانی حقوق کمیشن آزاد کشمیرکا دورہ کرے گا، اس 8 رکنی وفد میں مختلف ممالک کے نمائندے شامل ہوں گے،کمیشن مقبوضہ کشمیرسے آئے مہاجرین کے کیمپوں کا دورہ بھی کرے گا.

واضح رہے کہ اس کمیشن نے بھارت سے بھی دورے کی اجازت طلب کی ہے ، تاہم بھارت کی جانب سے کوئی بھی جواب نہیں دیا گیا ہے.

ترجمان پاکستانی دفترخارجہ کا کہنا ہے کہ پچھلے دنوں اقوام متحدہ کے انسانی حقوق کے کمشنر نےجائزہ کمیشن بھیجنے کی پیشکش کی تھی، انہوں نے زخمیوں،متاثرین، مقامی آبادی سےملنےکی درخواست کی تھی،مگر بھارت نے اقوام متحدہ کی پیشکش مسترد کردی تھی، جبکہ انسانی حقوق کی دیگرتنظیموں نےبھی بھارت سےرابطہ کیا، مگر بھارت انہیں بھی تسلی بخش جواب نہ دے سکا۔

او آئی سی


تنظیم تعاون اسلامی ایک بین ‌الاقوامی تنظیم ہے، جس میں مشرق وسطی، شمالی، مغربی اورجنوبی افریقا، وسط ایشیا، یورپ، جنوب مشرقی ایشیا اور برصغیر اور جنوبی امریکا کے 57 مسلم اکثریتی ممالک شامل ہیں۔ او آئی سی دنیا بھر کے 1.2 ارب مسلمانوں کے مفادات کے تحفظ کے لئے کام کرتی ہے۔

اقوام متحدہ


25 اپریل، 1945ء سے 26 جون، 1945ء تک سان فرانسسکو، امریکا میں پچاس ملکوں کے نمائندوں کی ایک کانفرس منعقد ہوئی۔ اس کانفرس میں ایک بین الاقوامی ادارے کے قیام پر غور کیا گیا۔ چنانچہ اقوام متحدہ کا منشور یا چارٹر مرتب کیا گیا۔ لیکن اقوام متحدہ 24 اکتوبر، 1945ء میں معرض وجود میں آئی۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top