The news is by your side.

Advertisement

قرض پروگرام، پاکستان اور آئی ایم ایف کے درمیان مذاکرات جاری

اسلام آباد : پاکستان اور آئی ایم ایف کےدرمیان قرض پروگرام کیلئے تکنیکی مذاکرات جاری ہے، آئی ایم ایف کےڈائریکٹرکمیونیکیشن کا کہناہےکہ جلد جائرہ مذاکرات کو مکمل کیا جائے گا۔

تفصیلات کے مطابق انٹرنیشنل مانیٹری اورپاکستان کےدرمیان قرض پروگرام کیلئے مذاکرات جاری ہے۔ آئی ایم ایف کے ڈائریکٹر کمیونیکیشن جیری رائس نے کہا کہ پاکستان کیلئے قرض پروگرام موجودہ صورت حال میں بھی پہلے کی طرح جاری ہے۔ پروگرام کا دوسرا جائزہ جلد مکمل کرلیاجائے گا۔

جیری رائس کا کہنا تھا کہ کہ پاکستان کےساتھ تکنیکی مذاکرات جاری ہیں،جو ایکس ٹینڈڈ فنڈفیسیلیٹی کیلئے کئے جارہےہیں، امید ہے کہ جلد مثبت نتائج سامنے آئیںں گے، مذاکرات میں کوروناوائرس کی عالمی وباکےباعث تعطل آیاتھا، اُس وقت ریپڈ فنانسنگ انتہائی اہم تھی۔

یاد رہے ایک ماہ قبل آئی ایم ایف نے پاکستان کیلئےایک ارب چالیس کروڑڈالرریپڈ فنانسسنگ کے تحت جاری کئے تھے، اعلامیے میں کہا گیا تھا کہ موجودہ غیریقینی صورتحال میں کوروناکےمعاشی اثرات سامنےآئیں گے، آئی ایم ایف کی مدد سے بین الاقوامی ذخائرمیں بہتری آئے گی اور عارضی اخراجات میں اضافےکیلئےبجٹ کومالی اعانت فراہم ہوگی۔

آئی ایم ایف کا کہنا تھا کہ صحت کی ہنگامی صورتحال سےنمٹنے اور معاشی سرگرمیوں کیلئےپاکستان نےمالی پیکج کااعلان کیا، حکومت پاکستان معاشرتی حفاظت کےپروگرام کومستحکم کررہی ہے اور پاکستانی حکام متاثرین کوفوری امدادفراہم کررہےہیں جبکہ اسٹیٹ بینک نے بھی نئی فنانسنگ سہولت،دیگرکئی بروقت اقدامات کیے۔

خیال ریے جولائی 2019 کو آئی ایم ایف نے پاکستان میں معاشی استحکام کے لیے تین سال کے عرصے میں 6 ارب ڈالر قرض فراہم کرنے کی منظوری دی تھی ، جس کے بعد پاکستان کو آئی ایم ایف کی جانب سے اب تک ایک ارب 45 کروڑڈالر کاقرضہ مل چکا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں