The news is by your side.

Advertisement

پاکستان تیل پیدا کرنے والا ملک نہیں اس کے باوجود قیمتیں سب سےکم ہیں،عمر ایوب

اسلام آباد: وفاقی وزیر توانائی عمر ایوب نے کہا ہے کہ پاکستان تیل پیدا کرنے والا ملک نہیں اس کے باوجود قیمتیں سب سےکم ہیں۔

تفصیلات کے مطابق وفاقی وزیر عمر ایوب نے اسلام آباد میں پریس کانفرنس کے دوران کہا کہ عالمی منڈی میں گزشتہ 46 دنوں میں پٹرول کی قیمت 112فیصد بڑھی ہے۔

وفاقی وزیر توانائی کا کہنا تھا کہ پاکستان تیل پیدا کرنے والا ملک نہیں اس کے باوجود قیمتیں سب سے کم ہیں،پاکستان میں پٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں خطے میں سب سے کم ہیں۔

عمر ایوب نے سابقہ حکومت کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ ن لیگ دور میں تیل کی قیمتوں میں ایک ماہ میں 31 فیصداضافہ کیا گیا تھا، تیل کی قیمتوں سے ٹیکس کی وصولیاں کی جاتی تھیں۔

انہوں نے کہا کہ ہمارا مقابلہ مافیاز کے ساتھ ہے،عوام کی ریلیف دینے کے لیے اقدامات اٹھائیں گے،ہم نے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں 25 فیصداضافہ کیا ہے، ہر فیصلہ عوام کو ریلیف اور تحفظ دینے کے لیے کر رہے ہیں۔

مشیر پٹرولیم ندیم بابر کا پریس کانفرنس کے دوران کہنا تھا کہ پی ایس او نے 18 مئی کو 21 ڈالر7سینٹ بیرل پر تیل خریدا،تیل کی قیمت 28 مئی کو 31 ڈالر اور 20 جون کو 44 ڈالر سے زائد تھی۔

انہوں نے بتایا کہ بھارت میں180 روپے فی لیٹر پٹرول فروخت ہو رہا ہے،چین137 اور بنگلہ دیش میں 154روپے میں تیل فروخت ہو رہا ہے،جاپان میں پٹرول کی قیمت 196 روپے فی لیٹر ہے۔

ندیم بابر کا کہنا تھا کہ یکم جولائی کو پٹرول کی قیمت بڑھتی تو32 روپے تک کا اضافہ بنتا تھا،وزیراعظم نے پوچھا کہ کیا طریقہ ہوسکتا ہے کہ قیمتوں میں اضافہ کم سے کم ہو۔

مشیر پٹرولیم کا مزید کہنا تھا کہ 26 جون کو قیمت کی تبدیلی سے اضافہ 32 کے بجائے 25 روپے بنا،وزیراعظم سے مشاورت کر کے 25 روپے قیمت بڑھانے کا فیصلہ کیا۔

پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں‌ ریکارڈ اضافہ

یاد رہے کہ گزشتہ روز حکومت نے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں مین 17 روپے سے 25.58 روپے فی لیٹر تک اضافہ کیا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں