The news is by your side.

Advertisement

پاک بحریہ نے سمندری حدود میں موجود بھارتی آبدوز کاسراغ لگا کر داخلے کی کوشش ناکام بنادی

اسلام آباد : مستعدپاک بحریہ نےدشمن کی ایک اورچال ناکام بنادی، پاک بحریہ نے اپنے سمندری زون میں موجود بھارتی آبدوز کاسراغ لگاکر  داخل ہونے سے روک دیا ۔

تفصیلات کے مطابق جنگی جنون میں مبتلا بھارت کو سمندری محاذ پر بھی ناکامی کا سامنا ہے، ترجمان پاک بحریہ کا کہنا ہے بھارتی آبدوزکاسراغ لگاکرپاکستان کے پانیوں میں داخل ہونے سے روک دیاگیا ہے، پاک بحریہ اعلیٰ پیشہ ورانہ مہارتوں کےساتھ ہردم چوکنا ہے۔

پاک بحریہ نے بھارتی آبدوز کی موجودگی کو خفیہ رکھنے کی ہرکوشش کو ناکام بنایا، ترجمان بحریہ کا کہنا ہے کہ امن قائم رکھنےکی حکومتی پالیسی،بھارتی آبدوزکونشانہ نہیں بنایاگیا، بھارتی آبدوزکونشانہ نہ بنانا پاکستان کی امن پسندی کاغمازہے، واقعےسےسبق حاصل کرکےبھارت کوامن کی جانب راغب ہوناچاہیے۔

ترجمان نے مزید کہا یہ اہم کارنامہ پاکستان نیوی کی اعلیٰ صلاحیتوں کامنہ بولتاثبوت ہے، پاکستان کی بحری سرحدوں کےدفاع کیلئےپاک بحریہ ہرلمحہ مستعدوتیارہے، کسی بھی جارحیت کامنہ توڑجواب دینےکی بھرپورصلاحیت رکھتےہیں۔

پاک بحریہ ایک بٹن سےبھارتی آبدوزکوسمندرکی تہہ میں دفناسکتی تھی، کموڈور(ر)عبیداللہ


پاک بحریہ نے بھارتی آبدوز کی فوٹیج بھی جاری کردیں ہیں ، کموڈور(ر)عبیداللہ نے کہا پاک بحریہ ایک بٹن سے بھارتی آبدوز کو سمندر کی تہہ میں دفنا سکتی تھی لیکن پاک بحریہ نے پاکستان کی امن کی پالیسی کے وژن کو آگے بڑھایا۔

کموڈور(ر)عبیداللہ کا کہنا تھا کہ دشمن کی آبدوزہماری سرزمین کی جانب بڑھ رہی تھی، وزیراعظم عمران خان کااعلان ہے جنگ کی پالیسی ہے نہ جنگ چاہتے ہیں، پاک بحریہ نے دشمن کی آبدوز کو روکا بلکہ واپس جانے پر مجبور کیا۔

انھوں نے مزید کہا پاک بحریہ بالکل مستعد ہے اور پوری طرح تیار ہے، جس آبدوز کو پکڑا گیا یہ جدید ترین ہے پھر بھی ہم سے نہ چھپ سکی، بھارتی آبدوز ایک سال پرانی ہے، نومبر2017 میں تیارکی گئی ہے۔

کموڈور(ر)عبیداللہ کا کہنا تھا بھارتی جدیدآبدوز بھی خود کو ہماری بحریہ سے چھپانے میں ناکام رہی، پاک بحریہ کے سامنے بھارت کی جدید آبدوز بھی بے بس رہی۔

خیال رہے نومبر 2016 کے بعد یہ دوسرا موقع ہے جب پاک بحریہ نے بھارتی آبدوز کا سراغ لگایا ہے۔

واضح رہے 27 فروری کو پاکستان نے فضائی حدود کی خلاف ورزی پر بھارت کےدو طیارے مارگرائے تھے اور پائلٹ ابھی نندن کوگرفتارکرلیا تھا، جس کے بعد بھارت نے بھی طیاروں کی تباہی اور پائلٹ لاپتہ ہونے کا اعتراف کیا تھا۔

ڈی جی آئی ایس پی آر نے بتایا تھا بھارتی طیارے پاکستانی حدود میں نشانہ بنائے، ایک طیارہ آزاد کشمیر دوسرا مقبوضہ کشمیر کی حدود میں گرایا۔

اس سے قبل 26 فروری کو بھارتی طیاروں نے پاکستانی حدود کی خلاف ورزی کی ، تاہم پاک فضائیہ کی بروقت ایکشن پر بھاگنے پر مجبور ہوگئے تھے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں