The news is by your side.

Advertisement

پاکستان کی بیمارافغان شہریوں کوانسانی ہمدردی کے تحت افغانستان جانے کی اجازت

چمن : افغان جارحیت کے بعد سرحد بند ہونے کے باوجود پاکستان سیکورٹی حکام نے بیمار افغان شہریوں کو انسانی بنیادوں پر افغانستان جانے کی اجازت دے دیدی۔

تفصیلات کے مطابق پاک افغان سرحد پر کشیدگی برقرار ہے اور آج چھٹے دن بھی باب دوستی پرتمام سرگرمیاں معطل اور ویزا سیکشن بند ہے جبکہ تجارتی سرگرمیاں اورپیدل آمدروفت بھی معطل ہے اور چمن کے سرحدی علاقے میں پاک فوج اور ایف سی کے تازہ دم دستے ہر قسم کی صورتحال کنٹرول کرنے کیلئے موجود ہیں۔

پاکستان کے سیکورٹی حکام نے بیمار افغان شہریوں کو انسانی ہمدردی کے تحت افغانستان جانے کی اجازت دیدی،حکام کا کہنا ہے کہ جن بیمارافغان شہریوں کے پاس ویزا پاسپورٹ ہو انہیں اجازت دی جائیگی۔

ایف آئی اے کا کہنا ہے کہ ایک افغان شہری کی میت پاسپورٹ ہونے پر افغانستان جانے دی ،  افغان شہری علاج کی غرض سے باقاعدہ ویزا لے کر کوئٹہ گیا تھا جبکہ 3 دن میں 20 بیمار افغان شہریوں کو پاسپورٹ پر افغانستان جانے دیا۔

دوسری پاک افغان جوائنٹ جیولاجیکل ٹیم نے سرحد کا سروے مکمل کرکے رپورٹ اسلام آباد اور کابل ارسال کردی ہے، رپورٹس پر جواب کے بعد باب دوستی کھولنے کا حتمی فیصلہ کیا جائے گا۔

سروے میں نقشوں کے ذریعے متنازع حدود کا تعین کیا جارہا ہے، پاک افغان ٹیموں کے نقشوں میں واضح فرق نہیں۔


مزید پڑھیں : چمن : افغان فورسز کی گولہ باری و فائرنگ،10 شہری شہید، 45زخمی


واضح رہے کہ گزشتہ روز چمن کےگاؤں کلی لقمان،کلی جہانگیر میں افغان فورسز نے مردم شماری کی ٹیم پر فائرنگ اور گولہ باری کی، جس کے نتیجے میں 10 افراد شہید اور 45زخمی ہوگئے تھے۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں