The news is by your side.

Advertisement

پاکستان نے افغان مشیرقومی سلامتی کی طرف سے لگائے گئے الزامات مسترد کردیے

اسلام آباد : پاکستان نےافغان مشیرقومی سلامتی کی طرف سے پشتونوں سے متعلق لگائے گئے الزامات مستردکردیے اور کہا افغان قیادت کےبیانات سے دونوں ممالک میں ماحول خراب ہوسکتا ہے۔

تفصیلات کے مطابق ترجمان دفتر خارجہ کی جانب سے بیان میں کہا گیا ہے کہ پاکستان نےافغان مشیرقومی سلامتی کی طرف سےلگائےگئےالزامات مستردکردیے اور افغانستان کے سفیر کو دفتر خارجہ طلب کرلیا۔

پاکستان نےافغان سفیر کو افغان مشیرقومی سلامتی کےبیان پرتحفظات سےآگاہ کرتے ہوئے کہا بےبنیادالزامات سے اعتماد میں کمی واقع ہوتی ہے، افغان قیادت کےبیانات سے دونوں ممالک میں ماحول خراب ہوسکتا ہے۔

ترجمان کا مزید کہنا تھا کہ پاک افغان ایکشن پلان برائےامن ویکجہتی جیسے فورمز کو موثر انداز میں استعمال کیا جائے۔

خیال رہے افغان مشیر قومی سلامتی حمد اللہ محب نے پشتونوں سےمتعلق بےبنیادالزامات لگائے تھے اور ایک ویڈیو بیان میں کہا تھا کہ پشتون قبائل پاکستان سے خوش نہیں، پشتونوں نے بغاوت کر دی ہے، بلوچ بھی اپنے حقوق کے لیے لڑ رہے ہیں اور جنہوں نے بھارت میں اپنی جائیدادیں چھوڑیں اور پاکستان میں قیام اختیار کیا انہیں مہاجر بلایا جاتا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ افغانستان سیکیورٹی فورسز جانتی ہیں کہ وہ کس کے لیے اور کس سے لڑ رہے ہیں، اس ہمسائے کے خلاف جس کی کوئی عزت و وقار نہیں ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں