The news is by your side.

Advertisement

افغان ٹرانزٹ ٹریڈ کی بحالی کے لیے حکومت پاکستان کا بڑا فیصلہ

اسلام آباد : حکومتِ پاکستان نے افغان ٹرانزٹ ٹریڈ کیلئے واہگہ بارڈر کھولنے کا فیصلہ کرلیا، فیصلہ افغان حکومت کی پاکستان سےخصوصی درخواست پرکیا۔

تفصیلات کے مطابق افغان ٹرانزٹ ٹریڈ کی بحالی کے لیے حکومت پاکستان نے بڑا فیصلہ کرلیا ، ترجمان دفتر خارجہ نے کہا ہے کہ افغان ٹرانزٹ ٹریڈ کیلئے واہگہ بارڈر کھولاجائے گا، ٹرانزٹ ٹریڈکےتحت واہگہ بارڈر15جولائی سے کھولا جائے گا.

دفتر خارجہ کے ترجمان کا کہنا تھا کہ کوروناتناظر میں تمام ایس او پیز،پروٹوکولز کاخیال رکھا جائےگا، فیصلہ افغان حکومت کی پاکستان سےخصوصی درخواست پرکیا، پاکستان نےافغان ٹرانزٹ ٹریڈ معاہدے کے تحت وعدہ پوراکردیا.

ترجمان نے مزید کہا معاہدے کے تحت پاکستان نے باہمی تجارت بحال کردی ہے، پاکستان،افغانستان کے درمیان کوروناسےپہلےکی پوزیشن پرتجارت بحال ہوگی.

دفتر خارجہ کے مطابق پاکستان افغانستان کے ساتھ دو طرفہ تعلقات کو تمام شعبوں میں مزید مستحکم کرنے کے لیے پرعزم ہے۔ ان شعبوں میں تجارت اور معاہدے کے مطابق افغان ٹرانزٹ ٹریڈ کو سہولیات کی فراہمی شامل ہے۔

خیال رہے پاکستان نے اعلان کیا تھا کہ پاک افغان بارڈر باب دوستی 22 جون کو دوطرفہ تجارت کےلئے کھل دیا جائے گا، 4 ماہ بعد افغانستان سے پاکستان کو اموال(امپورٹ) بحال ہو جائے گا جبکہ قندہار میں پاکستانی قونصل نے افغان تاجروں کو یقین دہانی کرائی تھی۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں