The news is by your side.

Advertisement

بیلٹ اینڈ روڈ منصوبہ ، حکومت پاکستان نے چین سے ریلیف مانگ لیا

اسلام آباد : حکومت پاکستان نے بیلٹ اینڈ روڈ منصوبے کی ادائیگیوں پر چین سے ریلیف مانگ لیا اور ادائیگیوں کیلئے دوبارہ مذاکرات کی کوشش شروع کردی ہیں۔

تفصیلات کے مطابق حکومت نے چین سے بیلٹ اینڈ روڈ منصوبے کی ادائیگیوں پر ریلیف مانگتے ہوئے دوبارہ مزاکرات کے لئے کوششیں تیز کردی ہیں۔

برطانوی اخبار فنانشل ٹائمز کا کہنا ہے کہ پاکستان بیلٹ اینڈ روڈ منصوبے کی ادائیگیوں کیلئے دوبارہ مذاکرات کی کوشش کررہا ہے، چینی کمپنیوں کے اشتراک سے پاکستان میں بنے بجلی گھروں میں اضافی لاگت اور بے ضابطگیوں کا انکشاف ہوا ہے ۔

رپورٹ کے مطابق وزیراعظم کی ہدایت پر کی گئی تحقیقات میں یہ انکشاف بھی ہوا کہ پورٹ قاسم الیکٹرک پاورکمپنی اور شین ڈونگ رووی انرجی کے اشتراک سے بنے کول پاورپلانٹ کی لاگت اور قرض کی شرح میں تین ارب ڈالر اضافی ادائیگی کی جارہی ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ حکومت پاکستان پاور ٹیرف کے بجائے منصوبوں کی ادائیگیاں دس سال تک موخر کرنے کا مطالبہ کررہی ہے اور کورونا کے باعث موجودہ معاشی صورتحال میں حکومت ریلیف کے ہر ممکن موقع سے فائدہ اٹھانا چاہتی ہے ۔

Comments

یہ بھی پڑھیں