The news is by your side.

Advertisement

پاکستان اسٹیل ملز کے 8884 میں سے7784ملازمین کوفارغ کرنے کا فیصلہ

اسلام آباد : پاکستان اسٹیل ملز کے 8884میں سے7784 ملازمین کو فارغ کرنے کا فیصلہ کرلیا،اس حوالے سے انتظامیہ نے سپریم کورٹ میں رپورٹ جمع کرادی۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان اسٹیل ملزانتظامیہ کی جانب سے سپریم کورٹ میں رپورٹ جمع کرادی گئی ، جس میں بتایا گیا ہے کہ پاکستان اسٹیل کے 8884 میں سے7784 ملازمین کوفارغ کرنےکافیصلہ کیا ہے ، پاکستان اسٹیل میں صرف ایک ہزار ملازمین کی گنجائش ہے۔

انتظامیہ کی رپورٹ میں کہا گیا ملازمین کی برطرفی کافیصلہ15اپریل کوہیومن ریسورس بورڈمیٹنگ میں ہوا، موجودہ اورسابق ملازمین کو40 ارب کی ادائیگیاں کرنا ہوں ۔

رپورٹ کے مطابق 2009 سے2015تک بھاری نقصانات پراسٹیل ملزکوبندکرناپڑا، 1990 میں پاکستان اسٹیل ملازمین کی تعداد 27 ہزار سےزائد تھی جبکہ 2019 میں ملازمین کی تعداد9350تھی، 2015 سے بند مل کے ملازمین کو30ارب کی ادائیگیاں ہوچکی ہے۔

انتظامیہ نے کہا وفاقی حکومت بیل آؤٹ پیکجز، تنخواہوں کی مد میں92ارب اداکرچکی ہے جبکہ مختلف منصوبوں کی مدمیں قومی خزانےکو229ارب کا نقصان پہنچا۔

رپورٹ میں پاکستان سٹیل ملز انتظامیہ نے نئے سی ای او کی فوری تعیناتی کی استدعا کرتے ہوئے کہا اسٹیل مل ایک سال سے بغیر سربراہ کے چل رہی ہے۔

انتظامیہ نے اسٹیل ملزکی زمینوں پرقبضہ ختم کرانے کیلئے پولیس،رینجرز کی مدد کی بھی استدعا کی اور کہا وفاق کوملازمین کوبرطرفی پرواجبات ادا کرنےکاحکم دیاجائے۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں