The news is by your side.

Advertisement

چینی کی قیمت ایک بار پھر 100روپے کلو سے اوپر جانے کا خدشہ

اسلام آباد : پاکستان شوگرملزایسوسی ایشن نے وزیراعظم عمران خان کے نام خط میں چینی کی قیمت ایک بار پھر 100روپے کلو سے اوپر جانے کا خدشہ ظاہر کردیا اور کہا وزیراعظم شوگر ملز کو گنے کی مقرركرده قیمت پرفراہمی یقینی بنائیں۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان شوگرملزایسوسی ایشن نے وزیراعظم عمران خان کے نام خط لکھا ، جس میں کہا گیا ہے کہ چینی کےمناسب داموں فروخت کیلئے آپ کےعزائم کی حمایت کرتے ہیں اور چینی کی بڑھتی قیمت پر چند حقائق آپ کے سامنے رکھنا چاہتے ہیں۔

پی ایس ایم اے کا کہنا ہے کہ حکومتی احكمات کےمطابق کرشنگ 30 نومبرسےشروع کی گئی، اس نتیجےمیں گنے سے کی جانے والی ریکوری انتہائی کم رہی، ملک تقریبا3 لاکھ ٹن چینی سےمحروم ہوا۔

خط میں کہا گیا کہ حکومت نےیقین دہانی کرائی تھی مڈل مین کی دخل نہیں ہوگی اور 200 روپے فی من قیمت یقینی بنائی جائے گی ، تاکہ عوام کو چینی 75روپے فی کلو کے مناسب ریٹ پر دستیاب ہو۔

پی ایس ایم اے نے کہا کہ کین کمیشنرز مڈل مین کا کردار ختم کرانے میں مکمل ناکام رہے، گنے کی فی من قیمت 270 سے 300 روپے تک پہنچ چکی ہے، چینی کی قیمت ایک بار پھر 100روپے کلو سے اوپر جانے کا خدشہ ہے۔

پاکستان شوگرملزایسوسی ایشن نے خط میں کہا کہ وزیراعظم شوگر ملز کو گنے کی مقرركرده قیمت پرفراہمی یقینی بنائیں، گنے کی مقررہ قیمت سے چینی کی قیمت نیچےلائی جاسکے گی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں