The news is by your side.

Advertisement

افغان ناظم الامور کی دفتر خارجہ طلبی

اسلام آباد: صوبہ بلوچستان کے شہر چمن میں افغان فورسز کی بلا اشتعال فائرنگ اور پاکستانی شہریوں کی شہادت کے بعد حکومت نے افغان ناظم الامور کو دفتر خارجہ طلب کرلیا۔

تفصیلات کے مطابق چمن بارڈر پر افغان فورسز کی بلا اشتعال فائرنگ پر پاکستان نے سخت رد عمل ظاہر کیا ہے۔ پاکستان نے افغان فورسز کی بلا اشتعال فائرنگ پر افغان ناظم الامور کو دفتر خارجہ طلب کرلیا۔

مزید پڑھیں: افغان فورسز کی چمن میں گولہ باری اور فائرنگ

افغان ناظم الامور کو احتجاجی مراسلہ بھی دیا گیا جس میں کہا گیا ہے کہ افغانستان فوری طور پر پاکستانی علاقوں میں فائرنگ کا سلسلہ بند کرے اور مستقبل میں ایسے واقعات کی روک تھام کے لیے اقدامات کرے۔

یاد رہے کہ آج علیٰ الصباح صوبہ بلوچستان کے شہر چمن میں افغان فورسز کی جانب سے گھروں پر گولہ باری اور فائرنگ کی گئی جس سے 3 شہری شہید جبکہ خواتین اور بچوں سمیت 18 افراد زخمی ہوگئے ہیں۔

پاکستانی فورسز کی جانب سے فائرنگ کا بھرپور جواب دیا گیا۔

سیکیورٹی حکام کے مطابق پاک افغان سرحدی علاقوں میں ہائی الرٹ جاری کر دیا گیا ہے جبکہ پاک افغان سرحد ہر قسم کی آمد و رفت کے لیے بند کردی گئی ہے۔

بعد ازاں ترجمان دفتر خارجہ نفیس زکریا نے میڈیا بریفنگ میں بتایا تھا کہ مردم شماری کے بارے میں افغان حکومت کو آگاہ کیا گیا تھا۔

مزید پڑھیں: پاکستان جوابی کارروائی کا حق رکھتا ہے، دفتر خارجہ

انہوں نے کہا تھا کہ پاکستان جوابی کارروائی کا حق رکھتا ہے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں