site
stats
پاکستان

سعودی عرب: 1 پاکستانی اور 5 سعودی باشندوں‌ کے سرقلم

ریاض: سعودی عرب میں منشیات اسمگلنگ اور قتل کے جرم میں سزا سنائے جانے کے بعد ایک پاکستانی شہری اور 5 سعودی باشندوں کے سر قلم کردیے گئے۔

خبر رساں ادارے اے ایف پی (ایسوسی ایٹڈ فرانس پریس) نے سعودی عرب کے سرکاری حکام کے حوالے سے بتایا ہے کہ ان افراد کو سزا سنائے جانے کے بعد پیر کو ان کے سر قلم کردیے گئے۔

سعودی عرب کی وزارت داخلہ کے مطابق رواں برس یہ واحد دن ہے جس میں ایک ہی دن میں 6 افراد کا سر قلم کیا گیا، پاکستانی شہری کو منشیات اسمگلنگ اور سعودی باشندوں کو قتل کے جرم میں یہ سزا دی گئی۔

میڈیا کو ملنے والی اطلاعات میں فوری طور پر پاکستانی شہری کی شناخت ظاہر نہیں ہوسکی۔

اے ایف پی نے سرکاری اعداد و شمار کے حوالے سے بتایا ہے کہ پیر کو 6 افراد کے سرقلم کیے جانے کے بعد رواں برس سر قلم کیے گئے افراد کی تعداد 44 ہوگئی ہے۔

یاد رہے کہ سعودی عرب میں سر قلم کیے گئے افراد کی تعداد دنیا میں سب سے زیادہ ہے جن افراد کے سرقلم کیے جاتے ہیں ان میں منشیات کی اسمگلنگ، دہشت گردی، قتل، زیادتی، مسلح ڈکیتی کے جرائم شامل ہیں

برطانیہ سے تعلق رکھنے والی انسانی حقوق کی عالمی تنظیم ایمنسٹی انٹرنیشنل کے اعدادو شمار کے مطابق گزشتہ برس سعودی عرب میں ان جرائم پر 153 افراد کو سر قلم کی سزا دی گئی۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top