The news is by your side.

Advertisement

پاکستان کو انتہائی مطلوب دہشت گرد قندھار میں مارا گیا

اسلام آباد: پاکستان کو انتہائی مطلوب دہشت گرد عبدالوہاب لاڑک قندھار میں مارا گیا ،دہشت گرد کراچی میں خودکش حملے کرانے کی منصوبہ بندی کررہا تھا۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان کو انتہائی مطلوب دہشت گرد قندھار میں ہلاک ہوگیا ، عبدالوہاب لاڑک کالعدم ٹی ٹی پی سندھ کا امیر تھا اور کراچی میں خودکش حملے کرانے کی منصوبہ بندی کررہا تھا۔

ذرائع کا کہنا تھا کہ دہشت گرد عبدالوہاب 22 مارچ کی صبح 2نامعلوم افراد کےہاتھوں قندھارمیں ہلاک ہوا ، اس کا تعلق لشکرجھنگوی عثمان سیف اللہ کرد گروپ سے تھا۔

ذرائع نے بتایا کہ ہلاک دہشت گرد پورے ملک بالخصوص سندھ میں متعدد کارروائیوں میں ملوث تھا اور سی ٹی ڈی سندھ کی انتہائی مطلوب دہشت گرد فہرست میں شامل تھا۔

ذرائع کے مطابق اگست 2020 میں عبدالوہاب لشکرجھنگوی کے دیگرساتھیوں سمیت ٹی ٹی پی میں شامل ہوا ، ہلاک دہشت گرد نے 30جنوری 2015 کو امام بارگاہ شکارپور میں خودکش حملہ کرایا ، اس حملے میں 53 معصوم افراد شہید اور 57 زخمی ہوئے تھے۔

دہشت گرد نے آرمی ایوی ایشنز بیس اور پی اےایف بیس سمنگلی میں حملےکی پلاننگ کی جبکہ اہل تشیع کی ٹا ر گٹ کلنگز اور شمالی وزیرستان میں متعدد دہشت گرد کارروائیوں میں ملو ث تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں