site
stats
پاکستان

پانامہ لیکس : سینیٹ کے اپوزیشن اراکین کا پارلیمنٹ کے باہردھرنا

اسلام آباد : سینیٹ کی کمیٹی میں حکومتی اراکین کی جانب سے پانامہ لیکس بل کی مخالفت پراپوزیشن نے پارلیمنٹ کے باہردھرنا دے دیا۔ اعتزازاحسن نے کہا کہ حکومت نے پانامہ تحقیقات کے معاملے سے راہ فرار اختیارکی۔

تفصیلات کے مطابق سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے قانون و انصاف کا اجلاس چیئرمین جاوید عباسی کے زیر صدارت ہوا جس میں وزیر قانون زاہد حامد نے اعتزاز احسن کے بل کی شق واری منظوری رکوا دی۔

ان کا کہنا تھا کہ اگر اپوزیشن کوئی ترمیم چاہتی ہے تو نئے نام کے ساتھ نئی ترمیم لائے۔ اجلاس میں سینیٹر اعتزاز احسن اور وفاقی وزیر قانون زاہد حامد کے درمیان تلخ کلامی ہو گئی۔ بعد ازاں تلخ کلامی کا معاملہ سڑک پر آ گیا۔

سینیٹ کےاپوزیشن اراکین نے پارلیمنٹ ہاؤس کے باہردھرنا دیا اور پاناما بل کی مخالفت پرحکومت کےخلاف نعرے لگائے۔ اس موقع پر سینیٹرز اعتزاز احسن، کامل علی آغا، تاج حیدر، بابر اعوان اور شاہی سید نے حکومت پر راہ فرار کا الزام لگا یا۔ جس کے جواب میں زاہد حامد اور نہال ہاشمی نے جوابی وار کیے۔

اپوزیشن نے اجلاس میں پاناما لیکس سے متعلق بل کی منظوری کا مطالبہ کیا تھا۔ جسے کمیٹی چیئرمین نے معاملہ کورٹ میں ہے کہہ کر مسترد کر دیا تھا۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top