site
stats
ماحولیات

چین میں پانڈا کی شکل کا شمسی توانائی پارک

بیجنگ: چین کے شہر ڈٹونگ میں دنیا کے سب سے خوبصورت پانڈا پاور پلانٹ کی تعمیر کا کام جاری ہے۔ ایک بڑے پانڈا کی شکل میں یہ شمسی توانائی سے بجلی پیدا کرنے کا ایک اہم مرکز بن جائے گا۔

اقوام متحدہ کے ترقیاتی پروگرام یو این ڈی پی کی معاونت سے بنایا گیا یہ سولر پارک چین کے قومی جانوروں میں سے ایک پانڈا کی شکل میں تعمیر کیا گیا ہے۔

پانڈا سولر فارم چین کے چند بڑے ماحول دوست توانائی حاصل کرنے والے منصوبوں میں شامل ہے جو 250 ایکڑ پر پھیلا ہوا ہے۔

فارم میں شمسی توانائی حاصل کرنے کے پینلز اس طرح سے لگائے گئے ہیں کہ فضا سے یہ ایک جائنٹ پانڈا معلوم ہوتا ہے۔

چین میں توانائی کی ضروریات پوری کرنے کے لیے مذکورہ چینی کمپنی پانڈا کی شکل کے مزید سولر فارم بنانے کا ارادہ رکھتی ہے۔  فارم کی تعمیر مکمل ہوجانے کے بعد یہاں سے بجلی کی ترسیل بھی شروع ہوجائے گی۔

منتظمین کا کہنا ہے کہ پانڈا کی شکل کا سولر فارم نئی نسل کو ماحولیاتی بہتری کے لیے ماحول دوست توانائی کے ذرائع اور معدومی کے خطرے کا شکار جانور پانڈا کے تحفظ کی طرف متوجہ کرنا ہے۔

مزید پڑھیں: پانڈا معدومی کے خطرے کی زد سے باہر

یاد رہے کہ چین اپنی توانائی کی تمام ضروریات کوئلے سے پوری کرتا ہے جس کے باعث چین دنیا کے فضائی طور پر آلودہ ترین ممالک کی فہرست میں سب سے اوپر ہے۔

چین کی فضائی آلودگی اس قدر خطرناک ہوچکی ہے کہ یہ ہر روز 4 ہزار افراد کی موت کا سبب بن رہی ہے جو آلودگی کے باعث مختلف بیماریوں کا شکار ہوجاتے ہیں۔

چین سمیت دنیا بھر میں اب کوئلے اور دیگر فاسل فیولز کا استعمال کم کر کے آہستہ آہستہ توانائی کی ضروریات قابل تجدید ذرائع سے پوری کی جارہی ہیں جن میں سرفہرست شمسی توانائی کا استعمال ہے۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top