The news is by your side.

Advertisement

بیٹے کو بھیانک سزا دینے والے والدین کو عمرقید

ماسکو: روس میں بیٹے کو اذیت ناک سزا دینے والے والدین کو عدالت نے عمرقید اور بھاری جرمانے کی سزا سنا دی۔

غیرملکی خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق سوتیلے باپ نے اپنی بیوی کے ساتھ مل کر بیٹے کو اذیت بھری سزا دی۔ بیٹے کو نوکیلی بیج(بک وھیٹ) پر ننگے گھٹنوں کے بل کھڑا رکھا گیا جس کے باعث اس کے گھٹنے شدید زخمی ہوگئے۔

عدالت نے 27 سالہ علینہ نامی والدہ کو ڈیڑھ سال جبکہ 35 سالہ سرگے نامی والد کو ساڑھے چار سال قید کی سزا سنائی۔ آٹھ سالہ بیٹے کو اسپتال میں طبی امداد فراہم کی گئی۔ ڈاکٹروں کا کہنا ہے کہ بیج بچے کے گھٹنے چھیلتے ہوئے ہڈیوں میں گڑھ گئے تھے جسے سرجری کے بعد نکالا گیا۔

عدالت نے والدین کو 8 ہزار 825 پاؤنڈ جرمانے کی بھی سزا سنائی ہے۔ اس واقعے کے بعد بچے کو فلاحی ادارے میں رکھا گیا ہے جبکہ کئی ایسے والدین بھی سامنے آئیں جنہوں نے اس بچے کی پرورش کی ذمے داری اٹھانے کی خواہش ظاہر کی۔

پولیس کا کہنا ہے کہ والدین نے بچے کو تقریباً 9 گھنٹے تک اسی طرح گھٹنوں کے بل نوکیلی بیج کر کھڑا رکھا جس کے باعث گہرے زخم آئے، اس دوران بچے کو لاتیں ماری گئیں اور بال بھی کھینچے گئے۔

عدالت میں نرس کا کہنا تھا کہ اس نے اس سے پہلے کبھی ایسی اذیت بھری سزا والدین کے ہاتھوں نہیں دیکھی۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں