The news is by your side.

Advertisement

پیرس حملے ، فرانسیسی وزیرِداخلہ کا چند مساجد بند کرنے کا اعلان

پیرس: حملوں کے بعد یورپ کے مسلمان خوف کا شکار ہوگئے، فرانسیسی وزیرِ داخلہ نے چند مساجد بند کرنے کا اعلان کردیا۔

پیرس حملوں کے بعد فرانس اور یورپ میں بسنے والے مسلمانوں کے لئے مشکل دور کا آغاز ہوگیا، فرانسیسی وزیرِ داخلہ نے ناقص سیکورٹی انتظامات پر متعلقہ اداروں کی خبرلینے کے بجائے نزلہ مسلمانوں پرگرادیا، انکا کہنا تھا کہفرانس میں کچھ مساجد کو بند کردیا جائے گا۔

فرانسیسی وزیرداخلہ نے الزام لگایا کہ یہ مساجد نفرت انگیز پیغامات عام کررہی ہیں، یہ پہلا موقع نہیں جب فرانس میں مسلمانوں کو متعصبانہ سلوک کا سامنا کرنا پڑرہا ہے۔

اس سے قبل بھی بلاوجہ مسلمان عتاب کا شکاررہے ہیں۔

پیرس کے میگزین میں گستاخانہ خاکوں کی اشاعت کو جائز قرار دیا گیا اور مسلمانوں کے احتجاج کو بلاجواز کہا گیا.

انسانی حقوق کے علمبردارہونے کے دعویدارفرانس میں مسلمان خواتین کواسکارف پہننے کی اجازت نہیں، اسکارف پہننے والی متعدد طالبات کو اسکولوں اور کالجز سے فارغ کردیا گیا.

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں