The news is by your side.

Advertisement

مریم نوازکی عدلیہ اور ریاست مخالف پریس کانفرنس پر پیمرا کا سخت نوٹس

اسلام آباد: پاکستان میڈیا ریگولیٹری اتھارٹی (پیمرا) کے ترجمان نے کہا ہے کہ مریم نوازنے عدلیہ اور ریاستی اداروں کے خلاف پریس کانفرنس کی جسے نشر کرنا قوانین کی خلاف ورزی ہے۔

تفصیلات کے مطابق پیمرا نے مریم نواز کی پریس کانفرنس کا نوٹس لیتے ہوئے اسے براہ راست نشر کرنے والے ٹی وی چینلز کو نوٹس جاری کردیا جس میں کہا گیا ہے کہ مریم نوازکی عدلیہ،ریاستی اداروں کیخلاف پریس کانفرنس براہ راست دکھائی گئی۔

پاکستان میڈیا ریگولیٹری اتھارٹی کی جانب سے جاری ہونے والے نوٹس میں کہا گیا ہے کہ ایسی پریس کانفرنس کو ٹی وی پر نشر کرنا  پیمرا قوانین کی صریحاً خلاف ورزی ہے۔

مزید پڑھیں: ویڈیو ٹیپ کا فرانزک آڈٹ کرایا جائے گا: فردوس عاشق اعوان

یہ بھی پڑھیں: مبینہ ویڈیو اسکینڈل، ناصر بٹ کے خلاف درج مقدمات کا ریکارڈ منظرِ عام پر

خیال رہے کہ پاکستان مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز نے پریس کانفرنس میں جج ارشد ملک کے حوالے سے ایک متنازع ویڈیو آڈیو ٹیپ پیش کی تھی جس پر مشیر اطلاعات فردوس عاشق اعوان نے کہا ہے کہ اس ٹیپ کا فرانزک آڈٹ کرایا جائے گا، یہ دراصل ن لیگ کی ڈوبتی کشتی کو سہارا دینے کی کوشش ہے، ویڈیو کو دیکھا جائے گا کہ کیا وہ اصلی ہے یا ٹیمپرڈ، اس ٹیپ کی فرانزک کے بعد سب سامنے آ جائے گا۔

علاوہ ازیں وزیر قانون بیرسٹر فروغ نسیم کا کہنا تھا کہ متنازع ویڈیو سامنے لانے کا اب کوئی فائدہ نہیں، ناصر بٹ نے جو کچھ کیا وہ توہینِ عدالت کے زمرے میں آتا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں