The news is by your side.

Advertisement

پی آئی سی واقعے کے ذمہ داروں کو قرار واقعی سزا دی جائے گی، راجہ بشارت

لاہور: وزیر قانون پنجاب راجہ بشارت کا کہنا ہے کہ پی آئی سی واقعے کے ذمہ داروں کو قرار واقعی سزا دی جائے گی۔

تفصیلات کے مطابق صوبائی وزیر قانون راجہ بشارت نے پی آئی سی واقعے پر ایوان میں اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ وزیراعلیٰ پنجاب نے پی آئی سی پر وکلا کے حملے کا نوٹس لے رکھا ہے۔

راجہ بشارت نے کہا کہ وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار نے 4، 4 ممبران پر مشتمل کمیٹی بھی تشکیل دی، وزیراعلیٰ کی تشکیل کردہ تحقیقاتی کمیٹی نے سفارشات بنائی ہیں۔

وزیر قانون پنجاب نے کہا کہ پولیس نے وکلاء کو 7 کلومیٹر تک کیوں نہیں روکا، معاملے کو دیکھ رہے ہیں، غفلت کا مظاہرہ کرنے والوں کی نشاندہی کر لی گئی ہے، معاملہ ہائی کورٹ میں ہونے کے باعث رپورٹ پبلک نہیں کرسکتے۔

انہوں نے کہا کہ واقعے کے ذمہ داروں کو قرار واقعی سزا دی جائے گی، واقعے کی تشہیر سے 2 طبقات میں تصادم کو دیکھایا گیا، ہم ڈاکٹراور وکلاء کے درمیان تاثر کو دور کرنے کی کوشش کریں گے۔

وزیر قانون پنجاب راجہ بشارت کا مزید کہنا تھا کہ واقعے کے ملزمان کے خلاف کارروائی کے ساتھ انتظامیہ کے خلاف بھی ایکشن ہوگا۔

یاد رہے کہ رواں ماہ 11 دسمبر کو لاہور میں پنجاب انسٹی ٹیوٹ آف کارڈیالوجی ( پی آئی سی) میں وکلا نے ہنگامہ آرائی کرکے اسپتال کے اندر توڑ پھوڑ کی تھی جس کے باعث طبی امداد نہ ملنے سے تین مریض جاں بحق ہوگئے تھے جبکہ وزیراعظم اور وزیراعلیٰ پنجاب نے واقعے کا نوٹس لیا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں