The news is by your side.

Advertisement

سابق صدر پرویزمشرف پرآئین شکنی مقدمے کی تلوارپھرلٹک گئی

اسلام آباد : سابق صدر جنرل پرویز مشرف پرآئین شکنی کی تلوار پھرلٹک گئی، چیف جسٹس نے مشرف کیس میں خصوصی عدالت کی از سر نو تشکیل کردی۔

جمہوری حکومت کو غیر آئینی طور سے ہٹانے اور ملک میں ایمرجنسی نافذ کرنے پر سابق صدر پرویزمشرف پھرعدالت کے پھیرے میں آگئے، خصوصی عدالت کی سربراہی جسٹس فیصل عرب کی بطور چیف جسٹس سندھ ہائی کورٹ اور سپریم کورٹ میں تعیناتی کی وجہ سے طویل عرصے سےخالی پڑی تھی۔

آئین شکنی کے اہم کیس کی سماعت کیلئے جسٹس فیصل عرب کی سربراہی میں تین رکنی بنچ انیس نومبر دو ہزار تیرہ کو تشکیل دیاگیا، بنچ میں بلوچستان ہائی کورٹ کی جسٹس سیدہ طاہرہ صفدر اور لاہور ہائی کورٹ کے جسٹس یاور علی شامل تھے ۔

جسٹس فیصل عر ب کی بطورسپریم کورٹ جج تعیناتی پر کیس کی سماعت کے متاثر ہونے پر چیف جسٹس انور ظہر جمالی نے جسٹس مظہر عالم کو خصوصی عدالت کا جج مقرر کردیا۔

شیڈول کے مطابق نئے سال میں مشرف کیس کی پہلی سماعت تیرہ جنوری کو ہوگی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں