The news is by your side.

Advertisement

پشاور : خواجہ سراؤں کا اپنے ساتھی کی لاش تھانے کے سامنے رکھ کرمظاہرہ

پشاور : فائرنگ سے زخمی ہونے والا خواجہ سرا علیشہ دم توڑ گیا، مشتعل خواجہ سراؤں نے فقیرآباد تھانے کے سامنے خواجہ سرا علیشہ کی لاش رکھ کر احتجاجی مظاہرہ کیا۔

تفصیلات کے مطابق پشاور میں دو روز قبل حیوانیت کانشانہ بن کرزخمی ہونے والا خواجہ سرا علیشہ بھی دوران علاج زندگی کی بازی ہارگیا۔

خواجہ سراؤں نے انصاف کے حصول کیلئے فقیرآباد تھانے کے سامنے میت رکھ کر احتجاج کیا۔

ان کا کہنا تھا کہ ایک سال میں خیبر پختونخواہ میں پینتالیس خواجہ سراؤں کو ٹارگٹ کر کے قتل کیا گیا ہے۔ حکومت ہمیں انصاف فراہم نہیں کر سکی۔

مظاہرین کا کہنا تھا کہ پولیس کہتی ہے کہ صبرکریں، سب ہی مررہےہیں ہم کہاں جائیں، خواجہ سراؤں کے احتجاج کےدوران ان کی راہ گیروں سےہاتھا پائی بھی ہوگئی، خواجہ سراساتھی کی میت لے کرتھانے پراحتجاج کررہےتھے۔

شہریوں کے رویے کے خلاف خواجہ سرا بھی بپھرگئے ایک خواجہ سرا نے کہا کہ پرویزخٹک ان کی بات نہیں سنتے۔ ان کے لیے الگ وزیرہونا چاہئیے ۔

خواجہ سراؤں نےخبردار کیا کہ دو روز میں ان کے ساتھی کے قاتل گرفتارنہ کیے گئے تو وہ پھرسڑکوں پرنکل آئیں گے۔

 

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں