The news is by your side.

رانا ثنااللہ کیخلاف توہین مذہب مقدمے سے متعلق پٹیشن سماعت کیلیے منظور

وفاقی وزیر داخلہ رانا ثنا اللہ کے خلاف توہین مذہب کا مقدمہ درج کرنے کے لیے دائر رٹ پٹیشن سماعت کے لیے منظور کرتے ہوئے ایڈیشنل سیشن جج گوجرانوالہ نے 20 مئی کو ایس ایچ او اروپ سے رپورٹ طلب کرلی ہے۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق وفاقی وزیر داخلہ رانا ثنا اللہ کیخلاف ایڈووکیٹ منظور قادر کی جانب سے رٹ پٹیشن دائر کی گئی تھی جس میں وزیراعظم شہباز شریف، وفاقی وزرا احسن اقبال، شاہد خاقان عباسی اور ایس ایچ او اروپ کو بھی فریق بناتے ہوئے رانا ثنا اللہ سمیت دیگر تمام فریقین کے خلاف توہین مذہب کا مقدمہ درج کرنے کی استدعا کی گئی تھی۔

درخواست گزار نے اپنی درخواست میں موقف اختیار کیا کہ رانا ثنا اللہ نے دوران انٹرویو نواز شریف کے استقبال کو حج سے زیادہ اہم قرار دیا تھا جب کہ حج اسلام کا اہم رکن ہے لہذا الزام علیہ بیان سے توہین اسلام کا مرتکب ہوا اور اس بیان سے تمام پاکستانیوں کے جذبات بھی مجروح ہوئے ہیں۔

درخواست گزار کا مزید کہنا تھا کہ رانا ثنا اللہ نے اپنے اس بیان پر آج تک اللہ اور قوم سے معافی نہیں مانگی جب کہ انہوں نے یہ بیان شہبازشریف، احسن اقبال اور شاہد خاقان کے مشورے سے دیا ہے لہذا تمام افراد کے خلاف توہین مذہب کا مقدمہ درج کیا جائے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں