The news is by your side.

Advertisement

اسلام مخالف نعرے لگانے والوں کو مسکراہٹ سے جواب دینے والی مسلم لڑکی

لندن : برطانیہ میں انتہا پسند تنظیم انگلش ڈیفنس لیگ کے مظاہرین کے سامنے مسکراتی ہوئی پاکستانی نژاد لڑکی کی تصویر سوشل میڈیا پر وائرل ہوگئی۔

برطانیہ میں پاکستانی نژاد لڑکی نے نفرت کا جواب محبت سےدینی کی مثال درست ثابت کر دیکھائی، برمنگھم میں انتہا پسند تنظیم انگلش ڈیفینس لیگ کے مظاہرے میں ایک خاتون کو مظاہرین میں گھرا دیکھ کر پاکستانی نژاد صفیہ خان اس لڑکی کی مدد کے لئے مظاہرین کے درمیان پہنچ گئیں۔

اسلام مخالف نفرت آمیز نعرے لگاتے مظاہرین کو صفیہ خان نے جواب مسکراہٹ سے دیا۔

تشدد کا جواب تشدد سے نہیں دیا جانا چاہیے، صفیہ خان

صفیہ خان کی مسکراتی تصویر سوشل میڈیا پر وائرل ہوگئی، صفیہ خان کا کہنا ہے کہ تشدد کا جواب تشدد سے نہیں دیا جانا چاہیے، میں ای ڈی ایل کے مظاہرے کا حصہ نہیں تھیں لیکن اپنی تصویر کو دنیا بھر میں وائرل ہوتے دیکھ کر بہت حیران ضرور ہوئیں۔

انہوں نے مزید بتایا کہ جب میں نے ایک لڑکی کو 25 لڑکوں کے درمیان گھیرا ہوا پایا تو خود کو روک نہیں پائی اور اس کی بچانے کیلئے میدان میں آگئی، بعد ازاں ان لڑکوں نے اس خاتون کو تو چھوڑ دیا اور مجھے گھیر لیا اور شاید یہی وقت تھا جب فوٹو گرافر نے میری تصویر لی۔

صفیہ خان برطانیہ میں پیدا ہوئی ہیں لیکن وہ پاکستانی اور بوسنیائی نژاد ہیں۔

صفیہ خان کی اس تصویر کو برمنگھم سے لیبر پارٹی کے رکن پارلیمان جیس فلپس اور برطانوی صحافی اور ٹی وی کی معروف شخصیت پیئرس مورگن نے بھی شیئر کی جبکہ مورگن نے اس تصویر کو ‘فوٹو آف دا ویک’ قرار دیا۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں