site
stats
پاکستان

چوری کرنے والی ایئر ہوسٹس کے خلاف تحقیقات ہوں گی: جی ایم فلائٹ آپریشنز

پیرس : قومی ائیرلائن کی فضائی میزبان پیرس کے شاپنگ سینٹر میں چوری کرتی ہوئی پکڑی گئی، پی آئی اے کے اسٹیشن مینجر نے ضمانت پر رہا کرالیا تاہم آئندہ چھ ماہ تک کسی غیرملکی پرواز پر نہیں جائیں گی۔

تفصیلات کے مطابق پی آئی اے باکمال لوگ، لاجواب سروس کے نعرے کے ساتھ کئی دہائیوں تک دنیا کی صف اول کی فضائی کمپنیوں میں شامل رہی لیکن اب اس کے ملازمین کی بیرون ملک غیرقانونی سرگرمیاں قومی وقار کی دھجیاں اڑاتی دکھائی دیتی ہیں۔

پی آئی اے کی فضائی میزبان افشاں خالد پیرس کے شاپنگ سنٹر ایروویل میں میک اپ کا سامان چوری کرتے ہوئے پکڑی گئی، سی سی ٹی وی کیمروں کی مدد سے پکڑی جانے والی فضائی میزبان پانچ گھنٹے تک پولیس کی تحویل میں رہی۔

پی آئی اے کے پیرس اسٹیشن کے مینیجر کی ضمانت پر افشاں خالد کو رہا کر دیا گیا اور چوری کا تمام سامان واپس لے لیا گیا۔


چورایئرہوسٹس کے خلاف ایکشن


پی آئی اے کے جنرل مینجر فلائٹ سروسز کا کہنا ہے کہ فضائی میزبان افشاں خالد پاکستان پہنچنے کے بعد 6ماہ تک کوئی بھی بیرون ملک کی پرواز نہیں کرسکیں گی۔

انہوں نے یہ بھی کہا کہ واقعے کے تمام پہلوؤں سے تحقیقات کے بعد قومی ایئرلائن سےوابستہ اس فضائی میزبان کے خلاف سخت محکمہ جاتی کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔


فضائی میزبان کو وارننگ


فرانسیسی پولیس نے خبردار کیا ہے کہ فضائی میزبان دوبارہ پیرس آئی تو اس کے خلاف کارروائی کی جائے گی۔


مزید پڑھیں : چوری کا الزام ‘پی آئی اے کی ایئرہوسٹس گرفتار


یاد رہے اس سے قبل رواں سال کے آغاز میں پاکستان انٹرنیشنل ایئرلائنز کی ایئرہوسٹس کو کینیڈا کے شہر ٹورنٹو میں ڈپارٹمنٹل اسٹور پر چوری کے الزام میں گرفتار کیا گیا تھا، ایئرہوسٹس کو اسٹور کے سی سی ٹی وی کیمرے کی فوٹیج کی مدد سے پکڑا گیا تھا۔

جس کے بعد قومی ائیرلائن کی ایئرہوسٹس کو ٹورنٹو کی مقامی عدالت میں پیش کیا گیا تھا، جہاں عدالت نے ایئرہوسٹس کو300کینیڈین ڈالرز کا جرمانہ عائد کرکے چھوڑ دیا تھا  پاکستان انٹرنیشنل ایئرلائنزکی جانب سے کہا گیا تھا کہ ایئرہوسٹس اب بین الاقوامی پروازوں پر فرائض انجام نہیں دے گی۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top