The news is by your side.

Advertisement

پی آئی اے طیارہ حادثہ کیس میں ملنے والی کروڑوں روپے کی رقم کے بارے میں اہم فیصلہ

کراچی: پی آئی اے طیارہ حادثہ کیس میں ملنے والے کروڑوں روپے کی ملکیت کا معاملہ حل نہ ہو سکا۔

تفصیلات کے مطابق جمعہ 22 مئی 2020 کو کراچی ایئر پورٹ کے قریب قومی ایئر لائن کا ایک طیارہ آبادی پر گر کر تباہ ہو گیا تھا جس میں 97 افراد جاں بحق اور 2 مسافر معجزانہ طور پر بچ گئے تھے۔

اس حادثے کی شکار پرواز 8303 کے ملبے سے رقم پر مشتمل ایک سوٹ کیس ملا تھا، جس میں 3 کروڑر وپے کے ساتھ جلی کرنسی بھی ملی تھی، تاہم 3 کروڑر وپے سے زائد کرنسی کے اصل مالک کا سراغ تاحال نہیں لگ سکا ہے۔

رقم کے 3 دعوے دار سامنے آئے، لیکن اصل رقم بتانے میں ناکام رہے، پی آئی اے ترجمان کا کہنا ہے کہ ملی بھگت سے رقم کے اعداد و شمار کے حصول کے بعد یہ دعوے دار ایک بار ناکام ہو کر دوبارہ نمودار ہوئے لیکن رقم منتقلی کے لیے درکار سرٹیفکیٹ طلب کرنے پر دعوے دار اسے فراہم کرنے میں ناکام رہے۔

ترجمان کے مطابق تین دعوے داروں کے دعوے غلط ثابت ہوئے، جعلی دعوؤں کے باعث اب یہ رقم سرکاری خزانے میں جمع کرانے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں