The news is by your side.

Advertisement

پی آئی اے کے شیئر ہولڈرز کا اجلاس، اندرونی کہانی سامنے آگئی

کراچی : پی آئی اے کے شیئر ہولڈرز کا سالانہ اجلاس بے سود ثابت ہوا، پی آئی اے کا جنرل اکاؤنٹنگ اور روینیو چھ ماہ گزرنے کے باوجود بھی اکاؤنٹس بنانے میں بری طرح ناکام ہوگئے۔

تفصیلات کے مطابق پی آئی اے کے شیئر ہولڈرز کی اندرونی کہانی اے آر وائی نیوز کو موصول ہوگئی، پی آئی اے کے شیئرز ہولڈرز کا سالانہ اجلاس چیئرمین عرفان الٰہی کی صدارت میں ہوا۔

سالانہ اجلاس میں شیئرہولڈرز کو صرف تین کوارٹر کا اکاؤنٹ پیش کیا گیا جبکہ سالانہ جنرل کونسل اجلاس میں پورے سال کے اکاؤنٹس پیش کرکے اس کی منظوری دی جاتی ہے، جس پر شیئرہولڈرز نے شدید احتجاج کیا۔

انہوں نے کہا کہ اکاؤنٹس مکمل طور پر تیار نہیں تو سالانہ اجلاس کیوں طلب کیا گیا؟ رمضان المبارک میں ہمارا وقت برباد کیا گیا۔ اجلاس میں شیئرز ہولڈرز کی جانب سے پی آئی اے کی کارکردگی پر شدید برہمی کا اظہار کیا گیا۔

شیئرہولڈرز نے پی آئی اے کے طیاروں سے ہیروئن برآمد ہونے کے واقعے پر بھی شدید غم و غصے کا اظہار کیا، ان کا کہنا تھا کہ وہ کون سے عناصر ہیں جو جہازوں میں ہیروئن رکھ رہے ہیں اور پی آئی اے اور پاکستان کو بدنام کرنے کی سازش کر رہے ہیں۔

چیئرمین پی آئی اے عرفان الٰہی نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ طیاروں سے ہیروئن برآمدگی کے حوالے سے اعلیٰ سطح کی تحقیقاتی کمیٹی کام کر رہی ہے، پی آئی اے کی بہتری کیلئے اقدامات کر رہے ہیں، شیئر ہولڈرز کے جتنے بھی مسائل ہیں انہیں حل کیا جائے گا۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں