The news is by your side.

Advertisement

خیبرپختونخوا میں پلاسٹک شاپنگ بیگ پر پابندی عائد

پشاور: وزیر اطلاعات خیبرپختونخوا شوکت یوسف زئی نے صوبہ بھر میں پلاسٹک شاپنگ بیگ کی فروخت اور استعمال پر پابندی عائد کردی۔

تفصیلات کے مطابق شہر کو صاف رکھنے کے لیے وزیر اطلاعات خیبرپختونخوا نے منفرد اقدام کرتے ہوئے صوبہ بھر میں پلاسٹک شاپنگ بیگ کے استعمال اور فروخت پر پابندی عائد کردی ہے۔

شوکت یوسف زئی کے مطابق تمام ڈی سیز کو دفعہ 144 لگانے کی ہدایت کردی گئی ہے، ان کا کہنا تھا کہ قانون بناچکے ہیں اب عمل درآمد ہوگا، پابندی کا مقصد شہر کو صاف رکھنا ہے۔

وزیر اطلاعات خیبرپختونخوا نے کہا کہ پلاسٹک شاپنگ بیگ کی فروخت پر کم سے کم 50 ہزار اور زیادہ سے زیادہ 50 لاکھ روپے جرمانہ ادا کرنا ہوگا۔

شوکت یوسف زئی نے کہا کہ جرمانے کی ادائیگی کے باوجود دوبارہ خلاف ورزی پر دو سال قید کی سزا بھی بھگتنی ہوگی۔

مزید پڑھیں: پلاسٹک بیگز کی فروخت کے خلاف پنجاب اسمبلی میں تحریک التوا

واضح رہے کہ رواں سال جنوری میں بھی پشاور میں پلاسٹک شاپنگ بیگ کی فروخت اور استعمال پر پابندی عائد کی گئی تھی۔

ضلعی انتظامیہ کی جانب سے شہر کے اندر قائم تمام شاپنگ مالز کو سات دنوں کے اندر اور میڈیکل اسٹوروں کو پندرہ دنوں میں موجودہ اسٹاک ختم کرنے کی ہدایت کی گئی تھی۔

ڈپٹی کمشنر پشاور کا کہنا تھا کہ پلاسٹک شاپنگ بیگ کے استعمال سے ماحولیاتی آلودگی بڑھتی جارہی ہے، سیوریج کے نالے بند ہوکر گندہ پانی باہر سڑکوں اور گلیوں میں آجاتا ہے جو نہ صرف شہر کی خوبصورتی پر اثر انداز ہوتا ہے بلکہ مختلف بیماریاں پھیلنے کا بھی خدشہ ہوتا ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں