site
stats
پاکستان

پرویز مشرف خفیہ ڈیل کرنا چاہتے تھے، وزیراعظم کا انکشاف

اسلام آباد: وزیر اعظم محمد میاں نواز شریف نے کہا ہے کہ پرویز مشرف مجھ سے خفیہ ڈیل کرنا چاہتے تھے، انہوں نے مجھے پیغام بھیجا، مجھے زبرستی جلاوطن کیا گیا اور ملک آنے نہیں دیا گیا اور آج مشرف ملک سے باہر ہیں اور وطن آ نہیں سکتے، یہ مکافات عمل ہے۔

یہ بات وزیر اعظم نواز شریف نے مسلم لیگ ن کی پارلیمانی پارٹی کے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کہی۔اجلاس میں ملک کی سیاسی صورتحال، فوجی عدالتوں کے قیام سے متعلق آئینی ترمیم، پاناما کیس اور سیاسی مخالفین کی مہم سمیت دیگر امور پر تفصیلی گفت و شنید کی گئی۔

اپنے خطاب میں وزیر اعظم نے بجلی، ایل این جی اور اقتصادی راہداری پر بھی بات کی اور اس عزم کا اظہار کیا کہ ہم ملک کو بجلی و قدرتی گیس میں خود کفیل کر دیں گے۔ وزیر اعظم نے سی پیک منصوبے کو خطے کے لیے گیم چینجر قرار دیا۔

انہوں نے اس بات کو خوش آئند قرار دیا کہ تمام پارلیمانی جماعتوں نے دہشت گردی کے خاتمے کے لیے فوجی عدالتوں کی بحالی پر اتفاق رائے کیا۔ دہشت گردی کے خاتمے کے لیے فوجی عدالتوں کی بحالی ضروری ہے۔

وزیر اعظم نے کہا کہ مخالفین کے الزامات کو سنجیدہ نہ لیا جائے۔ ہمیں جلا وطن کرنے والے آج خود ملک سے باہر ہیں، یہ مکافات عمل ہے۔ آج مشرف واپس آنا چاہتے ہیں۔ کچھ لوگوں کا کام منفی سیاست کرنا ہے۔ عوام نے منفی سیاست کرنے والوں کو مسترد کر دیا ہے۔

مشرف خفیہ ڈیل کرناچاہتےتھے،وزیراعظم کا انکشاف

وزیراعظم نواز شریف نے انکشاف کیا کہ پرویز مشرف مجھ سے خفیہ ڈیل کرنا چاہتے تھے،مشرف نے مجھے پیغام بھیجا کہ معاملات طے کرنا چاہتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ مجھے زبردستی ملک سے باہر بھیجا گیا اور واپس نہیں آنے دیا گیا آج مشرف ملک میں آنا چاہتے ہیں مگر آنہیں سکتے یہ مکافات عمل ہے۔

فنڈز نہ ملنے کا شکوہ

اجلاس میں ارکان پارلیمنٹ نے ترقیاتی فنڈز نہ ملنے کا شکوہ کیا جس پر وزیر اعظم نے تمام اراکین کو یکساں ترقیاتی فنڈ فراہم کرنے کی یقین دہانی کروائی۔

وزیر اعظم نے پارلیمانی رہنماؤں کی میٹنگ ہر 2 ماہ بعد بلانے اور اراکین پارلیمنٹ کو آئندہ عام انتخابات کی تیاری کرنے کی ہدایات بھی جاری کیں۔

انہوں نے کہا کہ مخالفین کے الزامات کو نظر انداز کرتے ہوئے ارکان پارلیمنٹ عوامی مسائل کے حل پر پر توجہ مرکوز رکھیں۔

پارلیمانی پارٹی کے اجلاس میں وفاقی وزرا سمیت مسلم لیگ ن کے اراکین سینیٹ و قومی اسمبلی نے شرکت کی۔ وزیر خزانہ اسحٰق ڈار، وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق اور وزیر پیٹرولیم شاہد خاقان عباسی نے اجلاس کو بریفنگ بھی دی۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top