site
stats
پاکستان

اسلام آباد: پاناما لیکس کے معاملے پر وفاقی کابینہ کا وزیر اعظم پر اظہار اعتماد

اسلام آباد: وفاقی کابینہ نے پانامہ لیکس کے باعث ملک میں ہونے والی تنقید اور اپوزیشن کی جانب سے دباؤ کے پیش نظر وزیر اعظم پر مکمل اعتماد کا اظہار کیا ہے۔ وفاقی کابینہ نے پاناما لیکس تحقیقاتی کمیشن کے لیے چیف جسٹس کو لکھے جانے والے خط کے فیصلے کی بھی توثیق کی۔

وزیر اعظم نے 6 ماہ کے تعطل کے بعد وفاقی کابینہ کا اجلاس طلب کیا تھا۔ وزیر اعظم کی زیر صدارت اجلاس میں وزیر خزانہ اسحٰق ڈار نے آئندہ بجٹ کی تیاریوں سے متعلق کابینہ کو تفصیلی بریف کیا۔ اجلاس میں بتایا گیا کہ تھا کوٹ حویلیاں موٹر وے کی تعمیر کے لیے چینی کونسل چار ارب 50 کروڑ ڈالر کی منطوری دے چکی ہے۔

وزیر اعظم نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ سیاسی مخالفین ملک کی معاشی ترقی کی راہ میں رکاوٹ ڈالنا چاہتے ہیں۔ 2018 تک تمام ترقیاتی منصوبے مکمل ہو جائیں گے۔ مخالفین کو خوف ہے کہ ان کی سیاست ختم ہو جائے گی۔

وزیر اعظم نے کہا کہ انہوں نے پانامہ لیکس پر خود کو اور اپنے خاندان کو تحقیقات کے لیے پیش کر دیا ہے، جلد حقائق عوام کے سامنے آجائیں گے۔

وزیر اعظم نے وفاقی وزرا کو ہدایت کی کہ وہ ترقیاتی منصوبوں پر توجہ مرکوز رکھِیں۔ وزارت خزانہ کو ہدایت کی گئی کہ آئندہ بجٹ میں آمدن میں اضافے اور اخراجات میں کمی کے لیے منصوبہ بندی کی جائے اور ترقیاتی بجٹ میں اضافہ کیا جائے۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top