وزیراعظم کی زیرصدارت اجلاس، جے آئی ٹی رپورٹ کو چیلنج کرنے کا فیصلہ JIT
The news is by your side.

Advertisement

وزیراعظم کی زیرصدارت اجلاس، جے آئی ٹی رپورٹ چیلنج کرنے کا فیصلہ

اسلام آباد: وزیراعظم میاں محمد نواز شریف کی زیرصدارت اعلیٰ سطح اجلاس میں فیصلہ کیا گیا ہے کہ جے آئی ٹی رپورٹ کے خلاف حکومت بھرپور انداز میں قانونی جنگ لڑے گی اور شریف خاندان کا بھرپور انداز میں دفاع کیا جائے گا۔

تفصیلات کےمطابق وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں وزیراعظم نوازشریف کی زیرصدارت اجلاس میں پاناما جے آئی ٹی رپورٹ کے بعد کی صورتحال کاجائزہ لینے کے لیے اعلیٰ سطح کا اجلاس طلب کیا گیا جس میں  وفاقی وزیردفاع خواجہ آصف، احسن اقبال، اسحاق ڈار، اٹارنی جنرل اشتراوصاف کے علاوہ قانونی اور آئینی ماہرین بھی شریک ہوئے۔

ذرائع کے مطابق اجلاس میں وزیراعظم کو جے آئی ٹی رپورٹ پر تمام قانونی پہلوؤں پر بریفنگ دی گئی جبکہ جے آئی ٹی رپورٹ منظرعام پر آنے کے بعد گزشتہ روز بھی وزیراعظم نے غیررسمی مشاورتی اجلاس کی صدارت کی تھی۔

یاد رہے کہ گزشتہ روز پاناما کیس کی مشترکہ تحقیقاتی ٹیم نے سپریم کورٹ میں حتمی رپورٹ جمع کرائی تھی جس میں شریف فیملی کے اثاثے آمدن سے زیادہ قرار دیے گئے تھے۔


جے آئی ٹی رپورٹ ردی اورعمران نامہ ہے، مسترد کرتے ہیں، وفاقی وزراء


واضح رہے کہ گزشتہ روز مسلم لیگ (ن) کے وفاقی وزرا نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے پاناما کیس پر تحقیقات کرنے والی جے آئی ٹی کی رپورٹ کو ردی قرار دیتے ہوئے مسترد کردیا تھا اور جے آئی ٹی کی رپورٹ کو پی ٹی آئی رپورٹ سے منسوب کیا تھا۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی وال پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں