The news is by your side.

Advertisement

بروقت اوردرست فیصلوں سےجنگ کاخطرہ ٹل گیا، وزیراعظم عمران خان

پارلیمانی پارٹی نےاقتصادی اصلاحات بل2018۔19کی منظوری دےدی

اسلام آباد : تحریک انصاف کی پارلیمانی پارٹی  نے اقتصادی اصلاحات بل2018۔19کی منظوری دے دی، وزیراعظم نے کہا بروقت اوردرست فیصلوں سےجنگ کاخطرہ ٹل گیا جبکہ پارٹی اراکین نے وزیراعظم عمران خان کے امن اقدامات پرخراج تحسین کیا۔

تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت تحریک انصاف کی پارلیمانی پارٹی کا اجلاس جاری ہے ، اجلاس میں اتحادی پارٹیوں کے ارکان بھی شریک ہیں۔

اجلاس میں وزیراعظم نےپاک بھارت کشیدگی پر پارٹی ارکان کواعتمادمیں لیا اور عالمی برادری کےتعاون پر بھی تبادلہ خیال کیا گیا جبکہ پارلیمانی پارٹی نےاقتصادی اصلاحات بل2018۔19کی منظوری دے دی۔

پارلیمانی پارٹی اجلاس میں اپوزیشن کےاحتجاج کاجائزہ لیاگیا اور قومی اسمبلی کاایوان منظم اندازمیں چلانے پرحکمت عملی بھی طے کی گئی۔

اجلاس میں وفاقی وزیرفیصل واوڈا کے حالیہ بیانات پرتبادلہ خیال کیا گیا اور وزیراعظم نےفیصل واوڈا کی معافی کومثبت اقدام قراردیا جبکہ پارلیمانی پارٹی کےاراکین بھی فیصل واوڈاکےساتھ کھڑے ہوگئے، اراکین نے کہا معافی کےبعداپوزیشن کی تنقیدبلاجوازہے، زبان کاپھسلناسب کےساتھ ہو سکتا ہے، معافی کےبعداحتجاج مناسب نہیں۔

دونوں ملکوں میں کشیدگی کم ہوئی لیکن خطرہ برقرار ہے ، وزیراعظم عمران خان


پارلیمانی پارٹی کے اجلاس سے خطاب میں وزیراعظم عمران خان نے کہا بروقت اوردرست فیصلوں سےجنگ کاخطرہ ٹل گیا، دونوں ملکوں میں کشیدگی کم ہوئی لیکن خطرہ برقرارہے۔

وزیراعظم کا کہنا تھا کہ کالعدم تنظیموں پرپابندی ملک کااندرونی معاملہ ہے، کوئی بھی فیصلہ عالمی دباؤکےپیش نظرنہیں کیاجارہا، دنیاکوواضح کرچکےوہ فیصلہ کریں گے جو ملکی مفاد میں ہوگا۔

پارٹی اراکین کا وزیراعظم کے امن اقدامات پرخراج تحسین


پارٹی اراکین نے وزیراعظم عمران خان کے امن اقدامات پرخراج تحسین کیا اور کہا اقدامات سےپاکستان کامثبت پیغام پہنچا جبکہ پارلیمانی پارٹی نے شاہ محمودقریشی کو بھی شاندار سفارتکاری پر شاباش دی۔

مزید پڑھیں: وفاقی وزیر فیصل واوڈا سے متعلق زیرگردش اطلاعات حقائق کے منافی ہیں، ترجمان وزیراعظم

گذشتہ روز ترجمان وزیراعظم نے وفاقی وزیر فیصل واوڈا سے متعلق زیرگردش خبروں کو حقائق کے منافی قرار دیتے ہوئے کہا تھا وزیر اعظم نے کوئی نوٹس لیانہ ہی فیصل واوڈاکو ہدایات دی گئیں، غیرذمہ دارانہ اطلاعات کی ترویج سےگریزکیاجائے۔

واضح رہے وزیراعظم عمران خان نے فیاض الحسن چوہان کے بیان کا نوٹس لیتے ہوئے وزیر اعظم نے وزیراعلیٰ پنجاب کو  ایکشن لینے کا حکم دیا تھااور کہا تھا   کسی بھی مذہب کی دل آزاری قبول نہیں ہوگی جبکہ  تمام وفاقی اورصوبائی وزراکو ایسےمعاملات پرمحتاط رہنےکی ہدایت بھی کی۔

جس کے بعد وزیراعظم عمران خان کی ہدایت پر صوبائی وزیر اطلاعات فیاض الحسن چوہان سے ان کی وزارت واپس لے لی گئی تھی ۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں