The news is by your side.

Advertisement

بھارت کے ساتھ اصل تنازع کشمیر کا ہے، حکومتیں چاہیں تومسئلہ حل ہوسکتا ہے، وزیراعظم

بشکک : وزیراعظم عمران خان نے کہا بھارت کےساتھ اصل تنازع کشمیر کاہے، دونوں ملکوں کی حکومتیں چاہیں تومسئلہ حل ہوسکتاہے، کشمیری  عوام پر طاقت کااستعمال خودبھارت کونقصان پہنچارہاہے، تمام ہمسایہ ممالک بالخصوص بھارت کیساتھ امن چاہتےہیں۔

تفصیلات کے مطابق بشکک میں وزیراعظم عمران خان نے روسی خبررساں ادارے کو انٹرویو دیتے ہوئے کہا پاکستان،بھارت دونوں امریکاکیساتھ اچھےتعلقات چاہتےہیں ، بھارت کےساتھ حالیہ کشیدگی میں کمی آئی ہے۔

صحافی نے سوال کیا کیاپاکستان بھارت کیساتھ عالمی سطح پرثالثی کاکردارچاہتاہے؟ کیا روس پاکستان اور بھارت کے درمیان ثالثی کا کردار ادا کر سکتا ہے،  جس پر وزیراعظم کا کہنا تھا پاکستان عالمی سطح پرثالثی کاخیرمقدم کرےگا، ترقی کیلئےامن ضروری ہے۔

تمام ہمسایہ ممالک بالخصوص بھارت کیساتھ امن چاہتےہیں

عمران خان نے کہا ہمسایہ ممالک کیساتھ کشیدگی ہوتوانسانی ترقی پرکام نہیں کیاجاسکتا، تمام ہمسایہ ممالک بالخصوص بھارت کیساتھ امن چاہتے ہیں، ہم بھارت کےساتھ3جنگیں لڑچکےہیں، ینوں جنگوں میں دونوں ممالک کانقصان ہوا، دونوں ممالک میں غربت بڑھی ہے۔

ان کا کہنا تھا ہمیں جنگ کےبجائےغربت کےخاتمےکیلئے لڑناہوگا، چین نےلاکھوں لوگوں کوغربت سےنکالا، ہماری توجہ مذاکرات کےذریعےمسائل کے حل پرہونی چاہیے، بھارت کےساتھ اصل تنازع کشمیر کاہے، دونوں ملکوں کی حکومتیں اورسربراہان چاہیں تومسئلہ حل ہوسکتاہے، بدقسمتی سے بھارت کی جانب سےکامیابی نہیں مل پارہی۔

ہمیں جنگ کےبجائےغربت کےخاتمےکیلئے لڑناہوگا

وزیراعظم نے کہا موجودہ بھارتی وزیراعظم بڑےمینڈیٹ کیساتھ حکومت میں آئےہیں، امید ہے مودی خطے میں امن، بہتر تعلقات کیلئے مینڈیٹ کا استعمال  کریں گے۔

صحافی نے سوال کیا آپ نریندرمودی کے ساتھ بات چیت کیلئےتیارہیں؟ تو عمران خان کا کہنا تھا ہم بھارت کوانتخابات کےبعدواضح اشارہ دےچکےہیں، انتخابات سےقبل بھی مذاکرات کیلئےسنجیدہ کوششیں کیں، بھارت میں پاکستان مخالف سیاسی مہم نےان کوششوں کونقصان پہنچایا، انتخابی عمل مکمل ہونے پربھارت سےامن کوششوں کی شروعات چاہتےہیں۔

2نیوکلیئرطاقتیں مسائل کاحل فوجی طاقت سے نکالیں، یہ سراسرپاگل پن ہوگا

انھوں نے مزید کہا بھارت تنازعات کےحل کیلئےپاکستان کی پیشکش کافائدہ اٹھاسکتاہے، نہیں ہوسکتاہے کہ 2نیوکلیئرطاقتیں مسائل کاحل فوجی طاقت  سے نکالیں، یہ سراسرپاگل پن ہوگا۔

صحافی نے سوال کیا کیاکرتارپورراہداری طرزپرتعلقات میں بہتری کیلئےاقدامات کررہےہیں؟ وزیراعظم نے جواب میں کہا کرتارپورکوریڈورسکھ کمیونٹی کے لئے پاکستان کابڑااقدام ہے، مثبت بھارتی جواب ملنےپرعوامی رابطوں کوفروغ دیاجاسکتاہے، دونوں ملکوں میں عوامی رابطوں کافروغ بہترحکومتی رویوں پر منحصرہے۔

کرتارپورکوریڈورسکھ کمیونٹی کیلئےپاکستان کابڑااقدام ہے

عمران خان کا کہنا تھا حکومتیں تلخیاں بڑھائیں تودونوں ممالک کےعوام قریب نہیں آسکتے، بھارتی حکومت کوخودکوئی بڑافیصلہ لیناہوگا، مسئلہ کشمیر  کا حل صرف کشمیری عوام کی امنگوں کےمطابق ہے، بھارت کوکشمیری عوام کوحق خودارادیت دیناہوگا۔

کشمیری عوام پر طاقت کااستعمال خودبھارت کونقصان پہنچارہاہے

انھوں نے کہا مسئلہ کشمیراقوام متحدہ کی قراردادکےمطابق حل کیاجاناچاہیے، کشمیری عوام پربھارتی مظالم ناقابل برداشت ہیں، طاقت کااستعمال خود بھارت کونقصان پہنچارہاہے، نوجوان کشمیری بھارتی مظالم کیخلاف اٹھ کھڑےہوئےہیں، یہ چیزخطےکےامن کیلئےنقصان دےثابت ہوسکتی ہے۔

وزیراعظم کا کہنا تھا روس،افغانستان،پاکستان کےدرمیان ریل روڈمنصوبہ شروع کیاجارہاہے، یہ زبردست منصوبہ ہے جو پاکستان اور روس کو خطے کے دیگر  ملکوں سے جوڑے گا، منصوبےکی تکمیل کیلئےافغانستان میں قیام امن ضروری ہے، طالبان اور افغان حکومت بھی منصوبے کو مستقبل کیلئےاہم سمجھتے ہیں۔

صحافی نے پوچھا پاکستان اورافغانستان میں رواں ہفتےاعلیٰ سطح کاسیکیورٹی اجلاس ہورہاہے، اعلیٰ سطح کےسیکیورٹی اجلاس سے پاکستان کو کیا امیدیں ہیں؟ وزیراعظم نے کہا مجھےسیکیورٹی اجلاس کےایجنڈے کا علم نہیں، یہ اجلاس دونوں ممالک کی سیکیورٹی فورسز کے درمیان ہورہا ہے۔

صحافی نے سوال کیا افغان صدراشرف غنی کےدورہ پاکستان سےکیاتوقعات ہیں؟ ان کا کہنا تھا سعودی عرب میں افغان صدراشرف غنی سے طویل ملاقات ہوئی، افغانستان میں قیام امن سےمتعلق پاکستان کےکردارپربات چیت ہوئی اور افغان طالبان سےمذاکرات اورافغان حکومت کےکردارپرتبادلہ خیال ہوا۔

طالبان اورامریکاکےدرمیان مذاکرات سےاچھےنتائج کی امیدہے

وزیراعظم نے کہا افغانستان میں امن کاقیام دونوں ممالک کیلئےناگزیرہے، افغانستان میں جنگ نےدونوں ممالک کےباڈرکونقصان پہنچایا، 40 سالہ ملٹری ایکشن کے بعد اس نتیجے پر پہنچےکہ افغانستان میں قیام امن ہی آخری حل ہے، طالبان اورامریکاکےدرمیان مذاکرات سےاچھےنتائج کی امیدہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں