The news is by your side.

حکومت نے 100روزمیں شانداراقدامات کئے، وزیراعظم عمران خان

اسلام آباد : وزیراعظم عمران خان وفاقی کابینہ اجلاس میں دوٹوک اعلان کیا کرپٹ عناصرکے لئے کوئی رعایت نہیں، حکومت نے 100روزمیں شانداراقدامات کئے۔

تفصیلات کے مطابق وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں وزیراعظم عمران کی زیرصدارت وفاقی کابینہ کا اجلاس ہوا، وفاقی کابینہ کے اجلاس میں تمام وزرا کی جانب سے اپنی اپنی وزارت کی کارکردگی رپورٹ پیش کی گئی، وزرا کی جانب سے پلاننگ کی تفصیلات اوراقدامات سے کابینہ کوآگاہ کیا گیا۔

اجلاس میں  100 روزہ حکومتی کارکردگی کا جائزہ لیاگیا، وفاقی کابینہ نے معاشی و خارجہ سطح کی کامیابیوں پر وزیراعظم کو خراج تحسین پیش کیا۔

وزیراعظم عمران خان نے کہا حکومت نے 100روزمیں شانداراقدامات کئے، کفایت شعاری وسادگی مہم صوابدیدی فنڈزختم کرکےاربوں روپےکی بچت کی، ہمیں تباہ حال معیشت ورثے میں ملی، بحران سے نکل آئے ،معاشی استحکام آرہا ہے۔

وزیراعظم نے کہا حکومت کی 100 روزہ کارکردگی حوصلہ افزا رہی، 100دن کےاہداف حاصل کرلئے، مالی مشکلات پرقابوپالیا گیا ہے اور 100دن میں ملک کو آگے لے جانے کی سمت کا تعین کرلیا ہے۔

وزیراعظم نے عزم کا اظہار کیا کہ 50لاکھ گھروں کی تعمیرکامنصوبہ انقلابی قدم ہے ، ہرحال میں مکمل کریں گے، حکومت کی معاشی پالیسیوں کے ثمرات جلد سامنے آنا شروع ہوجائیں گے، کرپشن کے خلاف مہم مزید تیز کرنا ہوگی۔

وفاقی کابینہ کے اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ کرپشن کے خلاف مہم جاری رہے گی جبکہ لوٹی ہوئی ملکی دولت جلد واپس لانے کے لیے مزید اقدامات اٹھائے جائیں گے۔

وفاقی کابینہ کااجلاس میں چینی کے اضافی سٹاک اور کسانوں کوادائیگی میں تاخیر پر غور کیا گیا ، وزیراعظم نے کہا شوگرملزکے تعاون سےکسانوں کے مفاد کے تحفظ دیں گے۔

اجلاس میں پاکستان براڈکاسٹنگ کارپوریشن کے لیے 40 کروڑ اضافی گرانٹ کی منظوری دی گئی ، گرانٹ ملازمین کی تنخواہوں ، پنشن کے لئے دی گئی جبکہ کابینہ نے ریونیو شعبے سے الگ ٹیکس پالیسی لانے کا فیصلہ کرلیا ، ٹیکس پالیسی کا فیصلہ تحریک انصاف کے منشور کی روشنی میں کیا گیا۔

کابینہ نے لیگل اور تکنیکی امور کے لیے کمیٹی قائم کردی اور پی بی سی کے مالی استحکام کے لیے پلان تیار کرنے کی منظوری بھی دی گئی، ،وزیراعظم نے ہدایت کی کسی سرکاری ملازم کوبرطرف نہیں کیا جائے گا۔

اجلاس میں ذوالفقاربھٹو یونیورسٹی کے وی سی کی تعیناتی کے لیے سرچ کمیٹی کی تشکیل ، سی پی پی اے میں عالیہ ماجد، غیاث الدین اور حامد خان کو ڈائریکٹر لگانے اور فیصل احمد کو ڈرگ لیبارٹری کوئٹہ کا ٹیکنیکل ممبر لگانے کی منظوری دی گئی۔

وفاقی کابینہ نے پاک افغان سرحد پر باڑاور لائٹیں کے لیے 20 ارب روپے مختص کئے گئے، سرحد پر باڑ لگانے کے لئے 20 ارب کی رقم رواں سال میں ہی جاری کی جائے گی۔

اجلاس میں پاکستان اسٹیل ملزکےملازمین کے لئے پروویڈنٹ فنڈ، گریجوٹی، تنخواہوں ادا کرنے ، اضافی گندم پولٹری ایسوسی ایشن آف پاکستان کو دینے اور گیس لوڈ مینجمنٹ پلان کی بھی منظوری دی گئی۔

وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت اجلاس میں دستاویزی تجاویز پرعملدرآمد ورکنگ پیپرز بھی کابینہ میں پیش کیے گئے۔

حکومت کا 100 روزہ پلان، مرکزی تقریب آج ہوگی


دوسری جانب حکومت کے 100 روزہ پلان کے حوالے سے مرکزی تقریب آج کنونشن سینٹرمیں ہوگی، تقریب سہ پہر تین بجے شروع ہوگی جس کی تیاریاں مکمل کرلی گئی اور دعوت نامے بھی جاری کردیے گئے ہیں۔

یاد رہے پاکستان تحریک انصاف کی حکومت نے100روزہ پلان کے جائزے کے لیے ویب سائٹ بنائی تھی ، ویب سائٹ میں پلان کے بنیادی بڑے منصوبوں کو شامل کیا گیا، ویب سائٹ کی مدد سے حکومت کی 100 روزہ کارکردگی کے حوالے سے عوام کو آگاہ کیا جائے گا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں