The news is by your side.

Advertisement

وزیر اعظم کی قبائلی علاقوں میں 3 اور 4 جی سروسز پہنچانے کی ہدایت

مہمند: وزیر اعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ صوبہ خیبر پختونخواہ سے انضمام کے بعد قبائلی لوگوں کو آگے لانے کا موقع ملاہے، 3 اور 4 جی سروسز قبائلی علاقوں میں لانے کی ذمہ داری مراد سعید کو دیتا ہوں۔ مشکل وقت سے گزر گئے، اب انشا اللہ اچھا وقت آئے گا۔

تفصیلات کے مطابق وزیر اعظم عمران خان صوبہ خیبر پختونخواہ کے ضلع مہمند پہنچے جہاں ان کا شاندار استقبال ہوا۔ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعظم کا کہنا تھا کہ شاندار استقبال پر مہمند کے لوگوں کا شکریہ ادا کرتاہوں۔

وزیر اعظم کا کہنا تھا کہ پاکستان ایک عظیم نظریے پر بنا تھا، مسلمانوں کے لیے مدینہ کی ریاست نبی کی سنت ہے۔ مدینہ کی ریاست پر زندگی میں پیچھے رہنے والوں کی ذمہ داری ہوتی ہے۔ احساس پروگرام بھی مدینہ کی ریاست کے ماڈل کے مطابق ہے۔ قبائلی علاقے کے لوگ دیگر پاکستان سے پیچھے رہ گئے ہیں، سب سے زیادہ غریب لوگ قبائلی علاقوں میں رہتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ نوکریوں کے لیے قبائلی لوگ دیگر شہروں اور ممالک میں جاتے ہیں، دہشت گردی کے خلاف جنگ کا سب سے زیادہ نقصان قبائلی علاقوں میں ہوا۔ قبائلی علاقے پختونخواہ میں ضم ہوئے اور الیکشن ہوئے، کوئی بھی یہ نہیں سمجھتا تھا کہ قبائلی علاقے ضم ہوجائیں گے۔ اب ہمیں قبائلی لوگوں کو آگے لانے کا موقع ملا ہے۔

وزیر اعظم کا کہنا تھا کہ کسانوں کو ٹیکنالوجی دے دی جائے تو بہت ترقی ہوگی، پورے مہمند میں زیتون کے باغات لگائیں گے، باغات لگانے سے ہمیں باہر سے زیتون منگوانے کی ضرورت نہیں پڑے گی۔ احساس پروگرام کے تحت کاروبار کے لیے نوجوانوں کو قرضے دے رہے ہیں۔ آمدنی بڑھانے کے لیے خواتین کو گائے، بھینسیں اور مرغیاں لے کر دیں گے۔

انہوں نے کہا کہ ہر سال نوجوانوں کو اسکالر شپس دیں گے، قبائلی علاقوں کے ڈھائی ہزار نوجوانوں نے اسکالر شپس کے لیے اپلائی کیا ہے۔ مہمند میں بہترین قسم کا سنگ مرمر کا ماربل ملتا ہے۔ مہمند میں سنگ مرمر کی انڈسٹری لگائیں گے۔ مہمند ڈیم سے قبائلی علاقوں میں پینے کا پانی فراہم کریں گے۔

وزیر اعظم کا کہنا تھا کہ جب میں قبائلی علاقوں کی بات کرتا تھا اس وقت کوئی بات نہیں کرتا تھا، قبائلی علاقوں کی آواز اب صوبائی اسمبلی میں اٹھے گی۔ 3 جی، 4 جی قبائلی نوجوانوں کا حق ہے۔ 3 اور 4 جی سروسز قبائلی علاقوں میں لانے کی ذمہ داری مراد سعید کو دیتا ہوں۔

انہوں نے مزید کہا کہ حکمران پیسہ لوٹ کر باہر جائیں تو ملک غریب ہوتا ہے، کبھی ایسی جماعت کو ووٹ نہ دیں جس کے لیڈرز کا پیسہ ملک سے باہر ہو۔ ہم نے نظام ٹھیک کرنا شروع کردیا ہے، مشکل وقت سے گزر گئے، اب انشا اللہ اچھا وقت آئے گا۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں