The news is by your side.

Advertisement

وزیراعظم کا چینی مافیا اور ذخیرہ اندوزوں کیخلاف سخت کریک ڈاؤن کا حکم

اسلام آباد : وزیراعظم عمران خان نے چینی مافیا اور ذخیرہ اندوزوں کیخلاف سخت کریک ڈاؤن کاحکم دیتے ہوئے کہا منافع خوری اور ذخیرہ اندوزی کسی صورت برداشت نہیں کی جائے گی۔

تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت پرائس کنٹرول سے متعلق اجلاس ہوا ، جس میں عمران خان نے چینی مافیا اور ذخیرہ اندوزوں کیخلاف سخت کریک ڈاؤن کا حکم دیتے ہوئے کہا شوگر فیکٹریز کنٹرول ترمیمی ایکٹ 2021اورقوانین پر ہر صورت عمل کرایا جائے۔

وزیر اعظم کا کہنا تھا کہ منافع خوری اور ذخیرہ اندوزی کسی صورت برداشت نہیں کی جائے گی، عوام کو ریلیف دینے کیلئےصوبائی،ضلعی حکومتیں فیلڈ میں نظر آئیں۔

اجلاس میں چینی کے اسٹاک اور قیمتوں کے حوالے سے تفصیلی بریفنگ دیتے ہوئے بتایا گیا کہ اس وقت ملک میں وافر مقدار میں چینی موجود ہے، سندھ میں شوگر ملزکی بندش کے فیصلے سے قیمتیں بڑھیں ہیں ، سندھ نے گندم بحران میں بھی وفاق اور دیگرصوبوں کے فیصلوں سے اختلاف کیا۔

وزیراعظم کا کہنا تھا کہ بین الاقوامی مارکیٹ میں اشیا کی قیمتیں بڑھ رہی ہیں ، پاکستان درآمدی اشیاپر انحصار کرتا ہے اس لیے مقامی مارکیٹ پر اثر آیا،حکومت غریب طبقے پر بوجھ کم کرنے کیلئے ہر ممکن اقدامات کررہی ہے۔

عمران خان نے کہا احساس پروگرام کی دیگر اسکیمیں غریب کوریلیف دینےکیلئےجاری کی گئی ہیں، عوام کے سامنے حقائق اور اعداد و شمار پیش کئےجائیں، قانون کے مطابق ذخیرہ اندوزوں ،ناجائز منافع خوروں کیخلاف کارروائی کریں۔

ان کا کہنا تھا کہ حکومت مہنگائی کے اثرات کااحساس رکھتی ہے، حکومت کی سیاست سے بالاتر ہو کر عوامی خدمت پر توجہ مرکوز ہے۔

اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہموجود چینی کے مکمل اسٹاک کو مارکیٹ میں فروخت کیلئےلایا جائے ، 15 نومبر سے ملک بھرمیں گنےکی کرشنگ کا آغاز کیا جائے، کرشنگ قوانین پر سختی سے عملدرآمد کو یقینی بنایا جائے گا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں