The news is by your side.

Advertisement

سرکاری پالیسیاں ٹویٹر پر نہیں سرکاری دستاویزات پر دی جاتی ہیں: وزیر اعظم

ڈیووس: وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی کا کہنا ہے کہ ٹرمپ کے ٹوئٹ کو امریکا کی سرکاری پالیسی نہیں سمجھا جا سکتا۔ سرکاری پالیسیاں ٹویٹر پر نہیں سرکاری دستاویزات پر دی جاتی ہیں۔

تفصیلات کے مطابق وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی نے امریکی اخبار واشنگٹن پوسٹ کو انٹرویو دیا۔

اپنے انٹرویو میں وزیر اعظم کا کہنا تھا کہ ٹرمپ کے ٹویٹ کو امریکا کی سرکاری پالیسی نہیں سمجھا جا سکتا۔ سرکاری پالیسیاں ٹوئٹر پر نہیں سرکاری دستاویزات پر دی جاتی ہیں۔

انہوں نے کہا کہ زمینی حقائق صدر ٹرمپ کے بیان کو سپورٹ نہیں کر رہے۔ گزشتہ 15 سالوں میں پاک امریکا تعلقات تنزلی کا شکار ہوئے۔ پاکستان دہشت گردی کے خلاف سب سے بڑی جنگ لڑ رہا ہے۔

وزیر اعظم نے کہا کہ مغربی سرحد پر 2 لاکھ فوجی دہشت گردی کے خلاف جنگ میں مصروف ہیں۔ دنیا افغانستان میں دشمن کو شکست دینے میں ناکام رہی۔ ہم نے اس دشمن کو اسی سرزمین پر اپنے وسائل سے شکست دی۔

وزیر اعظم نے مزید کہا کہ پاکستان میں دہشت گردوں کے محفوظ ٹھکانے نہیں ہیں۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں