The news is by your side.

Advertisement

پی پی کے بعد ن لیگ نے بھی قومی و صوبائی اسمبلیوں میں بیٹھنے کا فیصلہ کر لیا

لاہور: پیپلز پارٹی کے بعد مسلم لیگ ن نے بھی قومی اور صوبائی اسمبلیوں میں حلف اٹھانے کا فیصلہ کر لیا ہے، تاہم ن لیگی ارکان نے حتمی فیصلہ شہباز شریف پر چھوڑ دیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق ن لیگ نے فیصلہ کر لیا ہے کہ وہ قومی اور صوبائی دونوں اسمبلیوں میں بیٹھے گی، اس سلسلے میں حلف لینے یا نہ لینے کا فیصلہ ن لیگی ارکان نے شہباز شریف پر چھوڑ دیا۔

اسمبلیوں میں بیٹھنے سے متعلق ن لیگ کے اہم اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ حلف اٹھاتے وقت سیاہ پٹیاں باندھ کر احتجاج کیا جائے گا۔

اجلاس کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے مسلم لیگ ن لاہور کے صدر پرویز ملک نے کہا کہ حلف اٹھانے سے متعلق باقاعدہ اعلان کل کے اجلاس میں ہوگا۔

انھوں نے کہا کہ مسلم لیگ ن کے صدر میاں شہباز شریف نے کہا ہے کہ ہمارا کوئی رکن فارورڈ بلاک کی جانب نہیں جائے گا۔

پیپلز پارٹی اور ایم ایم اے رہنماؤں کی ملاقات: پی پی کا اسمبلی میں بیٹھنے کا فیصلہ

خیال رہے کہ کل آل پارٹیز کانفرنس ہو رہی ہے جس میں شہباز شریف بھی شریک ہوں گے، ن لیگ اس کانفرنس کے بعد اپنے مستقبل کا فیصلہ کرے گی۔

 قبل ازیں پاکستان پیپلز پارٹی نے بھی اسمبلیوں میں بیٹھنے کا فیصلہ کر لیا ہے، پی پی نے الیکشن میں شکست کا معاملہ پارلیمنٹ کے فلور پر اٹھانے پر زور دیا۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں