site
stats
پاکستان

ڈاکٹر عاصم کی ضمانت پی پی نواز ڈیل کے نیتجے میں ہوئی، عمران خان

اسلام آباد: تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے کہا ہے کہ نواز شریف نے اپنی کرپشن بچانے کے لیے پیپلز پارٹی سے ڈیل کی، یہی وجہ ہے کہ کرپشن کیس میں ڈاکٹر عاصم کو ضمانت مل گئی اور شرجیل میمن بھی واپس آگئے۔

اسلام آباد میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے عمران خان نے کہا کہ پاناما کیس کے فیصلے سے قبل نوازلیگ اور پیپلز پارٹی میں ڈبیلو ڈبیلو ایف سے بہتر نورا کشتی شروع ہوگئی، نواز شریف کو سندھ یاد آیا تو آصف زرداری پنجاب آکر بیٹھ گئے۔

انہوں نے کہا کہ دھرنوں کو دونوں جماعتوں نے جمہوریت کے لیے خطرہ قرار دے کر اتحاد کیا اور ایک دوسرے کی چوریاں چھپائیں، دھرنے کے دوران آصف علی زرداری کو رائے ونڈ بلا کر مک مکا کیا گیا۔

عمران خان نے کہا کہ جب میں نے الیکشن میں دھاندلی کی بات کی تو پیپلزپارٹی ن لیگ کی اتحادی تھی مگر اب آصف علی زرداری خود کہہ رہے ہیں کہ 2013 کے اتنخابات میں مسلم لیگ ن نے دھاندلی کی۔

خرابیوں کی نشاندہی کی تو دونوں جماعتیں متحد ہوگئیں

تحریک انصاف کے چیئرمین کا کہنا تھا کہ جب میں نے خرابیوں کی نشاندہی کی تو اُن باتوں کو جمہوریت کے لیے خطرہ قرار دے کر دونوں جماعتیں متحد ہوگئیں اور آج نوراکشتی شروع کردی کیونکہ نوازشریف اور آصف زرداری کے مفادات ایک ہی ہیں۔

پاناما کیس کے فیصلے پر عمران خان نے کہا کہ تحریک انصاف کا ن لیگ سے بڑا میچ چل رہا ہے جبکہ پی پی نے ایک بار پھر حکومت سے ڈیل کر کے اپنے کرپٹ لوگوں کو بچالیا، اس لیے ڈاکٹر عاصم کو ضمانت ملی اور 5 ارب روپے کی کرپشن کرنے والے شرجیل میمن بھی وطن واپس آکر آزادانہ گھوم رہے ہیں۔

پی ٹی آئی کے سربراہ نے مزید کہا کہ تحریک انصاف کی جدوجہد دیکھ کر دونوں جماعتیں ایک ہوجاتی ہیں، دعا ہے کہ پاناما کیس کا فیصلہ جلد سنایا جائے تاکہ ملک کو کرپٹ لوگوں سے نجات مل سکے۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top