The news is by your side.

Advertisement

علی رضا عابدی کے قتل میں ملوث چاراہم ملزمان گرفتار

کراچی: متحدہ قومی موومنٹ کے سابق رہنما اور سابق رکن اسمبلی علی رضا عابدی کے قتل میں اہم پیش رفت کرتے ہوئے چار افراد کو گرفتار کرلیا گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق پولیس نے اہم پیش رفت کرتے ہوئےایئرپورٹ سےبیرون ملک فرارکی کوشش کرنےوالااہم ملزم حراست میں لیاگیا تھا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ حراست میں لیے جانے والے ملزم نے دورانِ تفتیش ملزم کی نشاندہی پر کراچی کے مختلف علاقوں میں چھاپے مار کر مزید تین افراد کو حراست میں لیا گیا ہے۔

بتایا جارہا ہے کہ یہ چاروں افراد کسی نہ کسی طرح علی رضا عابدی کے قتل سے منسلک ہیں، زیر حراست تمام افراد سے تفتیش جاری ہے اور انہیں نامعلوم مقام پر منتقل کیا گیا ہے۔

قانون نافذ کرنےوالےادارے سی سی ٹی وی فوٹیج کو تکنیکی مدد سے واضح کر کے ملزمان تک پہنچے ہیں،سی سی ٹی وی فوٹیج کی مددسےملزمان کےچہرےشناخت کرلیےگئے ہیں۔

یاد رہے کہ سندھ پولیس علی رضا عابدی کے قتل کی تحقیقات میں جدید ذرایع کو استعمال کرتے ہوئے  آگے بڑھ رہی ہے، ان کے قتل میں استعمال ہونے والے اسلحے کے قتل کے ایک اور واقعے میں بھی استعمال ہونے کے شواہد پہلے ہی مل چکے ہیں۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ تیس بورپستول سے دس دسمبر کو لیاقت آباد میں احتشام نامی نوجوان کو قتل کیا گیا تھا، اسی پستول سے علی رضا عابدی کو بھی نشانہ بنایا گیا ہے۔

لیاقت آباد میں قتل ہونے والے احتشام نامی نوجوان جرائم پیشہ شخص کے بارے میں پتا چلا ہے کہ وہ عرفان نامی ایک شخص کی سابقہ اہلیہ سے شادی کرنا چاہتا تھا۔

احتشام کے قتل میں عرفان کے ملوث ہونے کے شبہات ہیں، قوی امکان ہے کہ یہ کام عرفان نے کرائے کے قاتلوں کے ذریعے انجام دیا تھا۔ احتشام کے قتل والے واقعے کے بعد سے عرفان غائب ہے اور پولیس کو اطلاعات ہیں کہ وہ ایران چلا گیا ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں