The news is by your side.

Advertisement

کراچی، نرسوں کا احتجاج، وزیراعلیٰ ہاؤس جانے پر پولیس کا لاٹھی چارج

کراچی: شہر قائد میں مطالبات کے حق میں نرسوں کے احتجاج پر پولیس نے لاٹھی چارج کیا اور متعدد کو حراست میں لے لیا۔

تفصیلات کے مطابق سندھ بھر کی نرسوں نے اپنے مطالبات کے حق میں پریس کلب سے احتجاجاً وزیراعلیٰ ہاؤس جانے کی کوشش کی جس پر پولیس نے لاٹھی چارج اور واٹر کینن کا استعمال کرتے ہوئے متعدد نرسوں کو حراست میں لے لیا۔

مظاہرین کا کہنا تھا کہ سروس اسٹرکچر پر عملدرآمد، ہیلتھ پروفیشنل الاؤنس اور ٹیچنگ الاؤنس فراہم کیا جائے، حکومت نے یقین دہانی کرائی مگر عملدرآمد نہیں کیا گیا۔

نرسوں کے احتجاج کے باعث پی آئی ڈی سی جانے والے راستے کو بھی بند کردیا گیا تھا جبکہ ٹریفک کو ایم آر کیانی روڈ سلطان آباد کی طرف موڑ دیا گیا تھا۔

مزید پڑھیں: کراچی، نرسنگ اسٹاف کا کل سندھ اسمبلی کے گھیراؤ کا اعلان

پولیس کی جانب سے نرسوں کی گرفتاری کے بعد وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے فوری طور پر زیر حراست مظاہرین کو رہا کرنے کا حکم دیا۔

مشیر اطلاعات سندھ مرتضیٰ وہاب نے نرسوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ وزیراعلیٰ سندھ نے آپ کے احتجاج کا نوٹس لیا ہے اور سیکریٹری صحت کو آپ کے تمام مسائل فوری حل کرنے کی ہدایت کی ہے۔

مشیر اطلاعات سندھ مرتضیٰ وہاب کی جانب سے یقین دہانی کے بعد نرسنگ الائنس نے مطالبات کی منظوری کے لیے حکومت کو 24 گھنٹے کی مہلت دیتے ہوئے احتجاج ختم کردیا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں